زرداری کی کرپٹ سوچ نے میثاق ِ جمہوریت کی دھجیاں اڑائیں:خواجہ سعد رفیق

لاہور:وفاقی وزیر ریلوے خواجہ سعد رفیق کا کہنا ہے کہ آصف زرداری اپنی ہمشیرہ کو چیئرمین سینیٹ بنوا کر نظام پر مسلط رہنا چاہتے ہیں، بلاول اور ان کے ساتھی نہ ہوتے تو زرداری صاحب رہی سہی پیپلز پارٹی کا سودا بھی کر لیتے،زرداری کی کرپٹ سوچ نے میثاق ِ جمہوریت کی دھجیاں اڑائیں۔خواجہ سعد رفیق نے سابق صدر آصف زرداری کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ آصف زرداری کی بلوچستان کے کٹھ پتلی وزیراعلی سے ملاقات سینیٹ الیکشن میں شرمناک ہارس ٹریڈنگ کا آغاز ہے۔انہوں نے کہا کہ بلوچستان میں تبدیلی درحقیقت جمہوریت کے غلاف میں لپٹی خرید وفروخت ہے، زرداری نے بلوچستان سے سینیٹ نشستیں لینے کے لیے جمہوریت کش سوچ کا ساتھ دیا، آصف زرداری نے بھٹوز کی پیپلز پارٹی کو بھا تا کا بازار بنائے رکھا ہے، بلاول اور ان کے ساتھی نہ ہوتے تو زرداری صاحب رہی سہی پیپلز پارٹی کا سودا بھی کر لیتے-سعد رفیق کا کہنا تھا کہ آصف زرداری اپنی ہمشیرہ کو چیئرمین سینیٹ بنوا کر نظام پر مسلط رہنا چاہتے ہیں اور سینیٹ کنٹرول کرنے کے لیے زرداری ہر جماعت کے ممبران کو خریدنے کی سازش کررہے ہیں۔وزیر ریلوے نے مزید کہا کہ کہ آصف زرادی بلوچستان سے سینیٹ کی چند نشستیں خریدنے کے لیے جوائنٹ وینچر پارٹنر بنے، انہیں جمہوریت کے لبادے میں اراکین کی خرید و فروخت کا گھناونا کھیل نہیں کھیلنے دیں گے، مسلم لیگ(ن)اور دیگر جمہوری قوتیں ہارس ٹریڈنگ کا راستہ روکیں گی جب کہ پی ٹی آئی خبردار رہے ان کے ممبران بھی زرداری کی سودے بازی کے نشانے پر ہیں۔خواجہ سعد رفیق کا کہنا تھا کہ مسلم لیگ ن اور دیگر جمہوری قوتیں ھارس ٹریڈنگ کا راستہ روکیں گی- پی ٹی آئی خبردار رہے ، ان کے ممبران بھی زرداری کی سودے بازی کے نشانہ پر ہیں، زرداری کی کرپٹ سوچ نے میثاق ِ جمہوریت کی دھجیاں اڑائیں۔


اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.