Daily Taqat

ملکی تاریخ میں پہلی مرتبہ پیرا میڈیکل اسٹاف کی الگ کونسل کے قیام کی منظوری دیدی گئی

وفاقی حکومت نے ملکی تاریخ میں پہلی مرتبہ پیرا میڈیکل اسٹاف کی الگ کونسل کے قیام کی منظوری دیدی۔ وزیر قومی صحت سائرہ افضل تارڑ نے کہا کہ کونسل کے قیام سے لاکھوں ہیلتھ ورکرز کو طبی شعبے میں کام کا موقع ملے گا۔ پارلیمنٹ سے بل پاس ہونے کے بعد کونسل کام شروع کر دے گی۔ پہلے مرحلے میں 6 ماہ کا عبوری ڈھانچہ بنے گا، جسے بعد میں مستقل کر دیا جائے گا۔ ریڈیالوجی ،پیتھالوجی، فارمیسیز اور سپیج تھراپی سمیت 15 شعبوں کے پیرا میڈیکل اسٹاف کی رجسٹریشن ہو گی۔ کونسل کے مسورے کی تیاری اور منظوری میں وزیر قومی صحت نے اہم کرداد ادا کیا۔ سائرہ افضل نے کہا کہ کونسل کے قیام دیرینہ مطالبہ تھا، لاکھوں پیرا میڈیکل اسٹاف کو قومی دھارے میں لایا جا سکے گا۔

کونسل سے وفاق سمیت چاروں صوبوں کے ہیلتھ ورکرز کو سرکاری و نجی اسپتالوں، طبی مراکز کے ساتھ ساتھ اپنی پرائیویٹ پریکٹس کی اجازت بھی مل جائے گی۔ الائیڈ ہیلتھ پروفیشنلز کونسل کے قیام سے نا صرف عطایئت کے رجحان میں کمی آئے گی، بلکہ پیرا میڈیکل اسٹاف کو پاکستان سمیت دنیا بھر میں الگ شناخت بھی ملے گی۔


Get real time updates directly on you device, subscribe now.

اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

Translate »