اہم خبرِیں

شام میں حضرت عمر بن ابو العزیز کے مزار کی بے حرمتی کا واقعہ انتہائی دلخراش ہے’ محمد عثمان المبارک

لاہور: شام میں حضرت عمر بن ابو العزیز، ان کی اہلیہ اور ان کے خادم کی قبر مبارک کے مزار کی بے حرمتی کا واقعہ انتہائی دلخراش ہے۔ 

قبروں کی بے حرمتی جو نہ صرف قرآن و حدیث کی تعلیمات کے سراسر خلاف ہے بلکہ کسی بھی مذہب کی تعلیم اور دنیاوی قوانین میں قابل قبول نہیں ہے۔ ان باتوں کا اظہار علامہ محمد عثمان المبارک خطیب جامعہ مسجد اونچی نے کیا۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ حضرت عمر بن عبدالعزیز خلفاء اسلام میں مثالی کردار کے خلیفہ شمار کئے جاتے ہیں۔ انہوں نے اپنے عدل وانصاف سے ہر شخص کا دل جیت لیا تھا، اس لئے آج ان کی وفات کے ١٣٤٠ سال گزرنے کے باوجود اُن کی قبر مبارک کے مسمار ہونے پر ہر مسلمان غمزدہ ہے، خواہ وہ عرب ہو یا غیر عرب، سنی ہو یا شیعہ۔ حضرت عمر بن عبدالعزیز کے بہترین خلیفہ ہونے کے واضح دلیل ہے۔

انہوں نے کہا کہ حضرت عمر بن عبدالعزیز اور انکی اہلیہ کے مزارات اور ان کے اجسادکی بے حرمتی پر انتہائی افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ اس واقعہ نے پوری دنیاکے مسلمانوں کو مغموم اور اشکبار کردیا ہے۔

حضرت عمر بن عبدالعزیزخلافت راشدہ کے طرز پرحکمرانی کر کے تاریخ میں عمر ثانی کا لقب پا چکے ہیں ان کے مزار ساتھ اس قسم کے وحشیانہ سلوک نے پورے عالم اسلام کو مضطرب اور بے چین کردیاہے علماء مشائخ نے تمام مسلمان ممالک کے سربراہوں سے اپیل کی ہے کہ وہ اپنے اختلافات بالائے طاق رکھ کر اس سنگین مسئلہ پر کوئی اتفاقی لائحہ عمل طے کریں اور دہشت گردوں کو اپنے انجام تک پہنچانے کیلئے ملکر جدوجہدکریں۔


Get real time updates directly on you device, subscribe now.

اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.