دہشتگردی سےملک کو 120ارب ڈالر کا خسارا ہوا

اسلام آ باد: وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں 6 ملکی سپیکرزکانفرنس ہو گی جس میں افغانستان، ترکی، ایران،روس اورچین کے سپیکرزکی شرکت کی ،کانفرنس کاعنوان”دہشت گردی اوربین العلاقائی رابطے“رکھاگیاہے،جس میں صدرممنون حسین ،چیئرمین سینیٹ رضاربانی اورسپیکرقومی اسمبلی ایاز صادق بھی شریک ہوئے،سپیکرزکانفرنس کی میزبانی قومی اسمبلی سیکرٹریٹ کررہاہے۔
سپیکر کانفرنس کے افتتاحی سیشن سے خطاب کرتے ہوئے سپیکر سردار ایاز صادق نے کہا کہ دہشتگردی سے پاکستان کو 120 ارب ڈالرکانقصان ہوا،دنیامیں دہشتگردی سے اب تک 2لاکھ سے زائدافرادجان کی بازی ہارچکے ہیں،انہوں نے کہا کہ دنیاکی آدھی کپاس چین اورپاکستان میں پیداہوتی ہے،منشیات کی تجارت سے بھی دنیاکوخطرہ ہے۔سپیکر ایازصادق نے کہا کہ عالمی تنظیم مسئلہ کشمیر اورمشرق وسطیٰ کے تنازعات حل کرنے میں ناکام رہی،دنیامیں سب سے زیادہ پناہ گزیں پاکستان،ترکی اورایران میں ہیں،انہوں نے کہا کہ کانفرنس میں تمام شریک ممالک میں تاریخی تعلقات ہیں،آپس کے اختلافات سے ترقی نہیں رکنی چاہئے،سپیکر ایاز صادق کا کہناتھا کہ کانفرنس میں شریک تمام ممالک دہشتگردی کوہرشکل میں مستردکرتے ہیں اورسپیکرزکانفرنس کوفورم کی شکل میں ہرسال ہونا چاہئے،انہوں نے کہا کہ گزشتہ 10سال میں دہشت گردوں سے دنیاکاکوئی خطہ محفوظ نہیں رہا،پارلیمانی ڈپلومیسی سے چیلنجزکامقابلہ بہتراندازمیں کیاجا سکتاہے۔


اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.