Daily Taqat

سینئر صحافی رﺅف کلاسرا نے لاہور قلندر کیلئے سزا تجویز کردی

پاکستان سپر لیگ کے سب سے پرجوش فرنچائز مالک کی سب سے نااہل ٹیم لاہور قلندر اب تک سیزن تھری کے پانچوں میچز ہارچکی ہے جس پر لاہور قلندرز کے مداح سخت غصے میں ہیں، انہی مداحوں میں سینئر صحافی رﺅف کلاسرا بھی شامل ہیں جنہوں نے پے در پے ناکامیوں کے تمغے سجانے والی لاہور قلندرز کیلئے ایسی سزا تجویز کی ہے کہ سوشل میڈیا پر قہقہے گونج اٹھے۔

رﺅف کلاسرا نے لاہور قلندر کے پانچواں میچ ہارنے پر ٹوئٹر کے ذریعے اپنے دل کی بھڑاس نکالی۔ انہوں نے کہا ” اوئے لہوری قلندرو کوئی حد ہوتی ہے۔ فواد رانا جیسا خوبصورت اور پیارا انسان پتہ نہیں کس جنم کی سزا بھگت رہا ہے کہ تم سب نالائق اور نکھٹوﺅں کو تگڑے پیسے دے کر اپنے لیے مستقل درد سر خرید لیا ہے، حد ہوگئی اے ویسے۔۔ اوئے کون لوک او تسی“۔

رﺅف کلاسرا نے پے در پے ناکامیوں سے دوچار ہونے والی لاہور قلندرز کیلئے دلچسپ سزا بھی تجویز کردی۔ رﺅف کلاسرا کے مطابق ”ویسے ان عالمی نالائق قلندروں کی ٹیم کی سزا یہ بنتی ہے کہ انہیں لہور واپس لا کر داتا دربار پر انہی سے لنگر کی دیگیں پکوا کر رات بھر کے جاگے ملنگوں میں لنگر روٹی بانٹنے پر لگا دینا چاہیے“۔

رﺅف کلاسرا کے ٹویٹ کرنے کی دیر تھی کہ مداح لاہور قلندرز پر ٹوٹ پڑے۔ سبطِ حسن نے کہا ’ گدھوں کا گوشت کھانے کی سزا بھگت رہے ہیں کلاسرا صاحب‘۔

جہانزیب ورک نے کہا ’ لوگ پیسے لگا کر خوشیاں خریدتے ہیں رانا صاحب نے پریشانیاں خرید لیں، رانا فواد صاحب ایک محب وطن پاکستانی ہے لیکن ساری گیم برینڈن میکلم پہ ، وہ آﺅٹ تو سب آﺅٹ ، عمر اکمل ہار کی سب سے بڑی وجہ ہے ‘۔

عبدالمنان نے لاہور قلندرز کے کھلاڑیوں کو ملنگ بن کر کسی دربار کے مجاور بننے کا مشورہ دے دیا۔

صائمہ کنول نے موقعے پر چوکا لگایا اور رانا فواد کو سینیٹ الیکشن میں حصہ لینے کا مشورہ دے ڈالا۔


Get real time updates directly on you device, subscribe now.

اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

Translate »