Daily Taqat

وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے مالدیپ میں صدرعبداللہ یامین کی طرف سے ایمرجنسی کے نفاذ کی حمایت سے انکار

وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے مالدیپ میں صدرعبداللہ یامین کی طرف سے ایمرجنسی کے نفاذ کی حمایت سے انکارکرتے ہوئے واضح کیا ہے کہ پاکستان دوسرے ملکوں کے معاملات میں عدم مداخلت کی پالیسی پر عمل پیرا ہے اور وہ اس ضمن میں اقوام متحدہ کے منشور میں شامل اصولوں کی پاسداری جاری رکھے گا۔گزشتہ روز وزیراعظم سے مالدیپ کے وزیرخارجہ ڈاکٹرمحمد عاصم نے ملاقات کی جوصدریامین کے خصوصی نمائندے کی حیثیت سے 8 فروری کو تین روزہ دورے پرپاکستان پہنچے تھے۔

ذرائع کے مطابق وزیراعظم نے مالدیپ کے وزیرخارجہ سے کہاکہ پاکستان ایمرجنسی کے انتہائی متنازع اقدام کے بعد مالدیپ کے صدرکا ساتھ دینے کاکوئی ارادہ نہیں رکھتا۔وزیراعظم کے ایک قریبی ساتھی نے نام نہ ظاہرکرنے کی شرط پربتایاکہ شاہد خاقان کا کہنا تھا کہ ہم نے 2007ءمیں اسوقت کے آمر پرویزمشرف کے ایمرجنسی نفاذ کی مذمت تھی چنانچہ ہم مالدیپ میں ایمرجنسی کی حمایت کیسے کرسکتے ہیں جہاں سپریم کورٹ نشانہ بن رہی ہے۔

مالدیپ کے وزیرخارجہ نے وزیراعظم پاکستان کو مالدیپ کے دورے کی دعوت بھی دی لیکن انھوں نے شائستہ اندازمیں معذرت کرتے ہوئے کہاکہ موجودہ حالات میں دورہ کرنا مناسب نہیں ہے۔ادھر وزیراعظم آفس سے جاری اعلامیے کے مطابق مالدیپ کے وزیرخارجہ نے وزیراعظم کو ان حالات کے بارے میں آگاہ کیا جو وہاں ایمرجنسی کے نفاذ کا پیش خیمہ ثابت ہوئے۔ انھوں نے خطے میں امن واستحکام کیلئے پاکستان کے اقدامات کیلئے مالدیپ کی حمایت کااعادہ کیا۔


Get real time updates directly on you device, subscribe now.

اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

Translate »