اہم خبرِیں
یوم آزادی تقریب،184 شخصیات کیلئے پاکستان سول ایوارڈزکا اعلان حکومت کا اقتصادی راہداری کا دائرہ بڑھانے کا فیصلہ کورونا وائرس، ویکسین کے ابتدائی تجربات کامیاب یوم آزادی کے موقع پرمسلح افواج کے نغمے جاری ساؤتھمپٹن ٹیسٹ، پاکستان نے 8 وکٹ کے نقصان پر 202 رنز بنالیے اسرائیل اوریو اے ای معاہدہ، مسلم ممالک کی کڑی تنقید یوم آزادی مناتے ہوئے کشمیریوں کونہیں بھولنا چاہئے، صدر مملکت وزیر اعظم عمران خان کا یوم آزادی پر قوم کو پیغام سید علی گیلانی کو نشان پاکستان سے نواز دیا گیا بی آر ٹی کے پہلے روز ہی سیکیورٹی اہلکاروں کی پٹائی پاکستان کا 73واں جشن آزادی، ملک بھر میں چودہ اگست کا شاندار ا... بھارت نے امن کوداؤ پرلگادیا، ڈی جی آئی ایس پی کے الیکٹرک خریدار کی جانچ پڑتال کی جائے، چیف جسٹس آج بھارت میں ایک ہندو اسٹیٹ جنم لے رہی ہے، شاہ محمود قریشی ترکی اورفرانس کی افواج آمنے سامنے، فوجی جھڑپ کا خطرہ خیبرپختونخوا اور پنجاب کو بجٹ خسارے کا سامنا یوٹیوب نے ای میل سروس بند کردی ڈاکٹروں کی طرح سوچنے والا "اے آئی سسٹم" تیار نازیہ حسن کو مداحوں سے بچھڑے 20 برس بیت گئے پاکستان انگلینڈ دوسرا ٹیسٹ، آج ساؤتھمپٹن میں شروع ہو گا

پولٹری فیڈ کیس، چیف جسٹس اطہر من اللہ اور اعتزاز احسن میں دلچسپ مکالمہ

اسلام آباد ہائیکورٹ میں پیپلز پارٹی کے رہنما اعتزاز احسن کے خلاف پولٹری فیڈ کیس کی سماعت کے دوران چیف جسٹس اطہر من اللہ اور اعتزاز احسن میں دلچسپ مکالمہ ہوا۔

سماعت میں اعتزاز احسن ویڈیو لنک کے ذریعے پیش ہوئے جس پر چیف جسٹس اطہر من اللہ نے کہا کہ اعتزازصاحب ہم آپ کو ویڈیو لنک پر خوش آمدید کہتے ہیں۔

اعتزاز احسن نے بتایا کہ میں یہاں بھی ماسک ساتھ رکھ کر اور سینیٹائزر استعمال کرکے بیٹھا ہوں جس پر چیف جسٹس کا کہنا تھا کہ اکیلے ہیں تو وہاں آپ کو ماسک کی ضرورت نہیں۔

بعدازاں چیف جسٹس اطہرمن اللہ نے ریمارکس دیے کہ یہ ملک کی واحد ہائیکورٹ ہےجہاں بیرون ملک سےبھی دلائل دینےکی سہولت ہے، اس پر اعتزاز احسن نے جواب دیا کہ مطلب ہم جہاں بھی ہوں کورٹ پیچھا نہیں چھوڑے گی۔

دلائل پیش کرنے سے قبل اعتزاز احسن نے معزز جج سے کہا کہ معافی چاہتاہوں میں روسٹرم پرنہیں جہاں آپ کے سامنے کھڑا ہوسکتا۔

چیف جسٹس نے جواب دیا کہ آپ کوکھڑا ہونے کی ضرورت نہیں،آپ دلائل شروع کریں، ویسے بھی آپ کا پتہ بھی نہیں چل رہا کہ آپ کھڑے ہیں یا بیٹھے ہیں۔

اعتزاز احسن کے دلائل کے دوران اٹارنی جنرل بھی روسٹرم پر موجود تھے۔


Get real time updates directly on you device, subscribe now.

اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.