پاکستان نے بھارت کے قائم مقام ڈپٹی ہائی کمشنرکودفترخارجہ طلب کر لیا

اسلام آباد: پاکستان نے بھارت کے قائم مقام ڈپٹی ہائی کمشنر کو دفتر خارجہ طلب کرکے لائن آف کنٹرول پر بھارتی اشتعال انگیزی پر شدید احتجاج کیا۔بھارت کے قائم مقام ڈپٹی ہائی کمشنر کو دفتر خارجہ طلب کرکے گزشتہ روز لائن آف کنٹرول پر رکھ چکری اور راولا کوٹ سیکٹر میں بھارتی فورسز کی جانب سے بلااشتعال فائرنگ پر شدید احتجاج کیا گیا۔

دفترخارجہ کے مطابق ڈی جی ساؤتھ ایشیا اینڈ سارک ڈاکٹر محمد فیصل نے بھارتی قائم مقام ڈپٹی ہائی کمشنرکواحتجاجی مراسلہ بھی دیا جس میں کہا گیا کہ بھارت 2003 کے سیز فائر معاہدے کا احترام کرے اور رکھ چکری سیکٹر سمیت سیزفائرکی خلاف ورزی کے دیگر واقعات کی تحقیقات کرے جب کہ بھارت سے مطالبہ کیا گیا کہ وہ اقوام متحدہ کے فوجی مبصرگروپ کو اپنا کردار ادا کرنے دے۔

واضح رہے پاکستان نے گزشتہ دنوں بھارتی جاسوس کلبھوشن یادیو کی اہلخانہ سے ملاقات کرائی اور اسی شام بھارتی فورسز نے گزشتہ روز سیز فائر معاہدے کی خلاف ورزی کرتے ہوئے بلا اشتعال فائرنگ کی تھی جس سے 3 پاکستانی فوجی شہید جب کہ ایک زخمی ہوا تھا جب کہ پاک فوج نے بھارتی جارحیت کا بھرپور جواب دیا تھا۔


اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.