پاکستان کے معروف عالم دین مولانا طارق جمیل پر تنقید

لاہور : پاکستان کے  مشہور و معروف عالم دین مولانا طارق جمیل کے بیانات سننے والوں کے دلوں میں گھر کر لیتے ہیں اور وہ اکثر اپنے بیانات میں حقوق العباد پر بہت زور دیتے ہیں ۔وہ بعض اوقات سماجی نا انصافیوں پر بھی اپنے دکھ و درد کا اظہار کرتے نظر آتے ہیں ۔مولانا طارق جمیل کے موضاعات اور فن خطابت سے بہت سے لوگ متاثر ہیں ۔مولانا طارق جمیل تبلیغی مقاصد کے لیے نا صرف پاکستان میں سرگرم ہیں بلکہ دنیا بھر کے مختلف ممالک میں تبلیغی کام کے لیے جاتے رہتے ہیں جہاں وہ مسلمانوں اور غیر مسلموں کو اللہ کا پیغام پہنچاتے ہیں ۔
مولانا طارق جمیل کی ایسی ہی غیر ملکی دورے کے دوران خوبصورت گاڑی سے اترتے ہوئے کی تصویر  جس پر اینکر پرسن اقرارالحسن بھی سامنے آگئے ۔مائیکروبلاگنگ ویب سائٹ ٹوئٹر پر مولانا طارق جمیل کا دفاع کرتے ہوئے اقرار الحسن نے کہا کہ ”فرینکفرٹ جاتا ہوں تو دوست فراری کے ساتھ لینے آتے ہیں ،گلاسگو میں ایک دوست کے پاس لیمبر گنی ہے ،ایڈن برگ میں دوست رولز رائس پر شہر گھماتا ہے ،ایسے موقع پر کیا کہا کروں کہ آپ چلیںمیں ٹیکسی میں آتے ہو ؟،مولانا کی تصویر پر تنقید بلا جواز ہے “۔


اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.