خواجہ حمید الدین سیالوی نے کل بروز منگل کوملک کے تمام علماء کرام کو سیال شریف بلا لیا

ساہیوال/ سرگودھا :  خواجہ حمید الدین سیالوی نے کل انیس دسمبر بروز منگل کوملک بھرکے علماء کرام و مشائخ عظام کا ہنگامی اجلاس سیال شریف میں طلب کر لیا۔

اجلاس میں حکومتی ہٹ دھرمی، استعفیٰ کے معاملات، گوجرانولہ کنونشن اور لاہور میں 4 جنوری کو ہونے والے جلسہ عام کے حوالے سے مشاورت کی جائے گی۔ سیالوی ذرائع کے مطابق ن لیگ سے علیحدگی اور رانا ثنا اللہ کے مستعفی نہ ہونے اور پیر سیال کے تحفظات دور نہ کرنے پر ملک گیر احتجاجی تحریک کا حتمی فیصلہ باہمی مشاورت سے کیا جائے گا۔ وزیراعلیٰ پنجاب کوشاں ہیں کہ پیر سیال کے تحفظات دور کئے جائیں۔ دوسری طرف پاکستان عوامی تحریک کے طاہر القادری اور پی ٹی آئی کے شاہ محمود قریشی بھی پیر سیال سے رابطے میں ہیں۔ جب کہ پیرسیال کے مرید وفاقی وزیر مملکت مذہبی امور پیر امین الحسنات شاہ اور مستعفی ایم پی اے صاحبزادہ غلام نظام الدین سیالوی کے چھوٹے بھائی چیئرمین یونین کونسل سیال شریف صاحبزادہ نعیم الدین سیالوی نے اپنے پیر و مرشد کے حکم پر استعفے نہیں دیئے۔ رابطہ کرنے پر دونوں نے ختم نبوت کے معاملہ پر خواجہ حمید الدین سیالوی کے موقف کی تائید کی لیکن تاحال استعفیٰ نہیں دیا جو لوگوں کے لئے سوالیہ نشان ہے۔حلقہ میں سیالوی خاندان کے چشم و چراغ کے مستعفی نہ ہونا کئی سوالوں کو جنم دے رہا ہے


اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.