Latest news

آج کشمیری فلسطینیوں کی طرح تنہارہ گئے ہیں، یہ بھارت اکیلا نہیں اسرائیل نے انہیں یہ سبق دیا ہے

خواجہ آصف نے پارلیمنٹ کے مشترکہ اجلاس میں اظہارِ خیال کرتے ہوئے کہا کہ مودی نے جو کشمیر کا حل دیا وہ دنیا نے دیکھا، ہمیں تاریخ نہ بتائیں، تاریخ پڑھنے کے لیے نہیں سبق سیکھنے کے لیے ہوتی ہے۔

انہوں نے کہا کہ کہا گیا ہے کہ آج شام تک عرب دنیا سے پیغام آئے گا، کل صبح تک دیکھ لیں گے، وزیر اعظم عمران خان کے دورے میں امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کا بیان کور اپ تھا۔

خواجہ آصف نے کہا کہ وزیر اعظم کی جانب سے 24 گھنٹے تک کوئی ردِ عمل نہیں آیا، کل وزیر اعظم نے ہمیں آر ایس ایس کا فلسفہ پیش کیا۔انہوں نے کہا کہ کشمیریوں کو ایل او سی میں اس طرف دھکیلا جائے گا، اس نازک وقت میں قوم کی صفوں میں کوئی اتحاد نہیں، مسئلہ کشمیر کا تقاضہ ہے کہ قوم مل کر اس جارحیت کا مقابلہ کرے۔انہوں نے یہ بھی کہا کہ یہ ایک لمبی جنگ ہے، سفارتی سطح کے ساتھ خدانخواستہ ہم پر جنگ بھی مسلط کی جا سکتی ہے، موجودہ صورتِ حال کشمیر کے مسئلے پر ہماری مکمل ناکامی ہے۔

انہوں نے کہا کہ کیا آپ جب مودی کو مس کال مارتے تھے تو آپ کو نہیں پتہ تھا کہ نریندر مودی کا ماضی کیا ہے، پارلیمنٹ کو معلوم ہونا چاہیے کہ حکومت افغانستان میں امریکا کو کیا ڈلیور کر رہا ہے۔خواجہ آصف کا مزید کہنا ہے کہ ہماری شہہ رگ اس وقت دشمن کے ہاتھ میں ہے، حکومت چاہتی ہے کہ قوم اس مسئلے پر متحدہ ہو۔

نون لیگی رہنما کا کہنا ہے کہ آج پاکستان پوری مسلم دنیا میں تنہا ہو گیا ہے، آج کشمیری فلسطینیوں کی طرح تنہا رہ گئے ہیں، یہ بھارت اکیلا نہیں اسرائیل نے انہیں یہ سبق دیا ہے۔

 


اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.