جسٹس ثاقب نثارنےپانی فراہمی کیس سے متعلق میئرکراچی کوطلب کرلیا

کراچی : چیف جسٹس ثاقب نثار نے موحولیاتی آلودگی اور پانی فراہمی کیس میں میئر کراچی وسیم اختر کو فوری طور پر طلب کر لیا۔
تفصیلات کے مطابق چیف جسٹس نے دوران سماعت استفسار کیا کہ میئر کراچی کون ہے ؟۔چیف جسٹس آف پاکستان نے میئر کراچی کو فوری طلب کرتے ہوئے کہا کہ بنیادی سوال ہے منصوبے کب پورے ہوں گے ،آپ رپورٹس میں ہمیں مت الجھائیں۔
چیف جسٹس نے کہا کہ میں آپ کو منصوبوں کی تفصیلات بتا دیتا ہوں،سیدھا بتایا جائے منصوبے پر عمل کب ہو گا،انہوں نے کہا کہ یہ بتائیں اس شہر میں پانی کی کمی کیوں ہے اورپانی کی کمی ٹینکرز کے ذریعے کیوں پوری کی جا رہی ہے۔چیف جسٹس نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ پانی ہر گھر کی ضرورت ہے ،پینے کا پانی ہٹا دیں،استعمال کیلئے ٹینکر میں کیوں دیا جاتا ہے۔
اس پر ایم ڈی واٹر بورڈ نے بتایا کہ بہت سے علاقے کچی آبادیاں ہیں جہاں لائنیں نہیں۔
چیف جسٹس نے استفسار کیا کہ باتھ آئی لینڈ کہاں ہے ؟،اس پر ایم ڈی واٹر بورڈ نے بتایا کہ جی باتھ آئی لینڈ میں پانی کی لائنیں ہی نہیں،ہاشم رضا زیدی نے کہاکہ ایڈووکیٹ جنرل سندھ کو تفصیلات بتا دی ہیں،چیف جسٹس آف پاکستان نے کہاکہ ٹینکرز سے فراہمی کا مطلب پانی ہے مگر دینے کا نظام نہیں۔


اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.