”عمران جمائمہ سے شادی کر لے کیونکہ۔“ سپریم کورٹ کا فیصلہ آتے ہی شیخ رشید نے دھماکہ کر دیا، کپتان کو جمائمہ سے شادی کی ایسی وجہ بھی بتا دی کہ پاکستان میں دھوم مچ گئی

عوامی مسلم لیگ کے سربراہ شیخ رشید نے نااہلی کیس میں بھرپور ساتھ دینے پر عمران خان کو جمائمہ سے دوبارہ شادی کرنے کا مشورہ دیدیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ آج بہت بڑا فیصلہ آیا ہے کیونکہ بڑا خوف کا عالم تھا اور اگر عمران خان نااہل ہو جاتے تو یہاں خوف کا عالم ہوتا اور لوگ شدید ذہنی دباﺅ کا شکار ہو جاتے۔ جہانگیر ترین کیساتھ بھی تکنیکی بات ہوئی ہے اور اب اس فیصلے کے بعد مسلم لیگ (ن) کے بہت سارے ایم این اے بھی تحریک انصاف میں آئیں گے جو مجھے کہتے تھے کہ اس فیصلے کے بعد آپ سے رجوع کریں گے۔ اس موقع پر انہوں نے کئی سال پرانی دستاویزات فراہم کرنے پر جمائمہ خان کی بے حد تعریف کی اور کہا کہ میں تو عمران خان کو مشورہ دوں گا کہ اگر انہوں نے دوبارہ شادی کرنی ہے تو جمائمہ خان سے ہی کر لیں کیونکہ ایک سیاستدان کیلئے پرانی دستاویزات اکٹھی کرنا یا سنبھالنا بہت مشکل ہوتا ہے مگر جمائمہ نے بڑا زبردست کام کیا ہے۔ اس موقع پر انہوں نے حدیبیہ پیپر ملز کے فیصلے پر مایوسی کا اظہار بھی کیا اور کہا کہ یہ سب کچھ نیب انتظامیہ کی ملی بھگت کے باعث ہوا ہے اور اس میں جسٹس جاوید اقبال کا کوئی عمل دخل نہیں ہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ جسٹس جاوید اقبال کی بنیاد پر میں یہ کہہ سکتا ہوں کہ انہوں نے 5 سپیشل پراسیکیوٹرز کی فائلیں ایوان صدر بھجوائیں لیکن کسی ایک کو بھی سپیشل پراسیکیوٹر تعینات کرنے کا نوٹیفکیشن جاری نہیں ہوا۔اس کے بعد جسٹس جاوید اقبال نے خود سے ہی خاور شاہ کا سپیشل پراسیکیوٹر کے طور پر نوٹیفکیشن جاری کر دیا جس کے بعد کہا گیا ہے کہ یہ قابل قبول نہیں ہے کیونکہ نوٹیفکیشن پر صدر پاکستان کے دستخط ہونا ضروری ہیں، تو یہ سب نیب کی انتظامیہ نے مل کر کیا، جسٹس جاوید اقبال کا اس میں کوئی عمل دخل نہیں ہے۔


اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.