وہ مکان مل گیا جس میں زینب کو اغواءکے بعد رکھا گیا۔

معصوم زینب کا قاتل تو اب تک قانون کی گرفت میں نہیں آ سکا البتہ ایک نیا دعویٰ ضرور سامنے آیا ہے  کہ  وہ مکان مل گیا ہے جس میں زینب کو اغواءکے بعد رکھا گیا۔جس علاقے میں یہ مکان موجود ہے، اس محلے میں رہنے والی ایک عورت نے قانون نافذ کرنے والی ایجنسیز کو فون کال کر کے بتایا کہ یہ وہ مکان ہے جہاں زینب کو اغواءکے بعد رکھا گیا تھا۔ یہ تصاویر انتہائی معتبر ذرائع سے حاصل کی گئی ہیں جن کے مطابق اس مکان کو دینے والے شیخ نامی پراپرٹی ڈیلر کو حراست میں لے کر تفتیش شروع کر دی گئی ہے۔ مذکورہ پراپرٹی ڈیلر نے صرف پیسے کے لالچ میں یہ مکان لاہور کی ایک پارٹی کو دیا اور 25 ہزار روپے ایڈوانس لیا۔ اس معاملے پر محلے کی ایک عورت نے سیکیورٹی ایجنسیز کو فون کر اطلاع دی کہ زینب کو اس مکان میں رکھا گیا تھا۔ گرفتار پراپرٹی ڈیلر سے تفتیش کی جا رہی ہے کہ اس نے یہ مکان کسے، کیسے اور کن شرائط پر دیا اور یہاں رہنے والوں کی تفصیلات اس سے حاصل کرنے کی کوشش کی جا رہی ہے۔ اب دیکھنا یہ ہے کہ پولیس کی تحویل میں پراپرٹی ڈیلر سے تفتیش کے دوران اس معاملے پر پیش رفت ہوتی ہے یا نہیں، ہماری معلومات کے مطابق یہ وہی مکان ہے جس میں زینب کو رکھا گیا اور اب ایجنسیز بھی تفتیش کر رہی ہیں کہ اگرزینب یہاں لائی گئی تو پھر اس کی لاش کو یہاں سے دوسری جانب کیسے منتقل کیا گیا۔اطلاعات کے مطابق پراپرٹی ڈیلر نے صرف پیسوں کے لالچ میں مکان دیا، وہ نہیں جانتا تھا کہ وہ کسے مکان دے رہا ہے اور اس کا ان لوگوں کیساتھ کوئی معاہدہ بھی ہوا۔ پولیس نے پراپرٹی ڈیلر کے موبائل سے ہونے والی فون کالز کی تفصیلات بھی حاصل کر لی ہیں اور موبائل فون سے ملنے والے نمبر لے کر تحقیقات شروع کر دی گئی ہیں۔“


اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.