Daily Taqat

حکومتِ پنجاب: 9 آزاد اراکین کی (ن) لیگ میں شمولیت کی یقین دہانی

پنجاب میں حکومت سازی کے لیے مسلم لیگ ن اور تحریک انصاف کے درمیان کسمپرسی کی سی کیفیت چل رہی ہے، اور دونوں جماعتوں نے ہی جیتنے والی جماعتوں اور امیدواروں سے رابطے مزید تیز کردیے ہیں۔ مسلم لیگ ن کی سینئر قیادت سے 9 آزاد اراکین نے ملاقات کی اور پارٹی میں شمولیت کی یقین دہانی کرائی ہے، جبکہ پارٹی صدر شہباز شریف کی صدارت میں ن لیگ کی مرکزی مجلس عاملہ کا اجلاس بھی آج ہوگا، جس کے دوران صوبے میں حکومت سازی کے امور پر تبادلہ خیال کیا جائے گا۔ ووٹوں کے تناسب سے مسلم لیگ ن کو تحریک انصاف پر برتری حاصل ہے تاہم پی ٹی آئی صوبے میں حکومت سازی کا اعلان کرچکی ہے۔ مسلم لیگ ن نے ایک مرتبہ پھر صوبے میں حکومت بنانے کے لیے پیپلز پارٹی کے بعد مسلم لیگ ق سے بھی رابطہ کیا، اس سلسلے میں سردار ایاز صادق نے ق لیگ کے رہنما چوہدری پرویز الہی کو فون کیا اور پنجاب میں حکومت سازی کے لیے تعاون مانگا۔

اس موقع پر سابق وزیراعلیٰ پنجاب چوہدری پرویز الہی کا کہنا تھا کہ وہ اس وقت اسلام آباد میں ہیں، اس لیے آئندہ دو روز بعد رابطہ کریں۔  دوسری جانب  شہباز شریف نے گزشتہ روز پیپلز پارٹی کے جنوبی پنجاب کے صدر مخدوم احمد محمود سے ملاقات کی، جس کے دوران انہوں نے صوبے میں پیپلز پارٹی کے 6 ایم پی ایز کی حمایت مانگی۔ شہباز شریف آج پیپلز پارٹی کے رہنما خورشید شاہ سے بھی ملاقات کریں گے اور پنجاب میں حکومت سازی سمیت وفاق میں آئندہ کے لائحہ عمل پر تبادلہ خیال کریں گے۔ یاد رہے کہ پنجاب میں مسلم لیگ ن کے پاس 129، تحریک انصاف 123 اور صوبے سے کامیاب ہونے والے آزاد امیدواروں کی تعداد 29 ہے جو حکومت سازی کے لیے اہم کردار ادا کریں گے۔


Get real time updates directly on you device, subscribe now.

اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

Translate »