نوازشریف اور زرداری میں فرق صرف طریقہ واردات کا ہے:عمران خان

تحریک انصاف کے سربراہ عمران خان نے کہا ہے کہ سابق وزیراعظم نوازشریف کو اگلے ماہ منی لانڈرنگ میں سزا ہوگی ، پنجاب اور سندھ کی پولیس ماورائے عدالت قتل میں ملوث ہے۔ نواز شریف اور آصف زرداری میں فرق صرف طریقہ واردات کاہے۔ان کا مزید کہناتھاکہ آصف زرداری کے ساتھ کھڑے ہونے کا جرم نہیں کرسکتا وہ ایک مصدقہ مجرم ہے،شہبازشریف پر بھی ماورائے عدالت قتل کا الزام ہے ۔عمران خان نےکہا کہ لوگوں کو مقابلوں میں مارکر پولیس کو کرمنل بنایا جا رہاہے،سندھ اور پنجاب میں پولیس کو غیر سیاسی کیاجائے۔کراچی میں پولیس بڑا مسئلہ ہے ،یہاں کا نظام بہتر بنانے کی ضرورت ہے،پہلے ہی پولیس ریفارمز کر لی جاتیں تو ماورائے عدالت قتل ہوتے اور نہ ہی رینجرز کو بلانے کی ضرورت پڑتی۔کےپی میں اقتدار ملا تو 1200پولیس والے مر چکے تھے،آج وہاں ہر چیز پر قابو پاچکے ہیں۔ خیبر پختونخوا میں جرائم نہیں ہے، جرائم تو ساری دنیا میں ہوتے ہیں، دیکھنے والی بات یہ ہے کہ جب جرم ہوتا ہے تو پولیس کی تفتیش میں کوئی رکاوٹ تو نہیں ہوتی۔ایک سوال کے جواب میں عمران خان نے کہا کہ زینب اور عاصمہ کے قتل کے معاملے میں فرق ہے،عاصمہ کے والد نے آرمی چیف سے انصاف کی فراہمی کا مطالبہ نہیں کیا کیونکہ انہیں خیبر پختونخوا کی پولیس پر اعتماد ہے۔ قصور میں 7 سال زینب سے زیادتی اور قتل کے واقعے سے پہلے بھی ایک اسکینڈل سامنے آیا تھا، جس کا بین الاقوامی چائلڈ پورنو گرافی سے تعلق تھا۔


اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.