Daily Taqat

امیدواروں کی حتمی فہرست جمعہ کوہی جاری کی جائے گی, الیکشن کمیشن

الیکشن کمیشن کی جانب سے امیدواروں کی حتمی فہرست جمعہ کو ہی جاری کی جائے گی اور ہفتہ کو انتخابی نشان الاٹ ہوں گے۔عام انتخابات کے لیے تین مراحل طے کرلیے گئے اور اب اگلے مرحلے میں امیدوار کاغذات نامزدگی واپس لے سکتے ہیں اور ایسے امیدوار جن کے نامزدگی فارمز منظور ہوچکے ہیں وہ آج ہی اپنے پارٹی ٹکٹ بھی جمع کرائیں گے۔انتخابی شیڈول کے مطابق الیکشن کمیشن کی جانب سے امیدواروں کی حتمی فہرست آج جاری کی جائے گی اور کل انتخابی نشان الاٹ ہوں گے۔ انتخابی نشانات جاری ہونے کے بعد امیدوار یکم جولائی سے 23 جولائی تک انتخابی مہم چلا سکیں گے اور 24 جولائی کو وقفے کے بعد 25 جولائی کو ملک بھر میں پولنگ ہوگی۔پولنگ کے لیے انتہائی سخت اقدامات کیے جائیں گے اور فوج کی نگرانی میں پولنگ کا عمل مکمل کیا جائے گا۔یاد رہے کہ انتخابی عمل کے لیے پہلے مرحلے میں امیدواروں نے کاغذات نامزدگی جمع کرائے جس کے بعد اسکروٹنی کا عمل مکمل ہوا اور تیسرے مرحلے میں امیدواروں کے کاغذات نامزدگی کی منظوری اور یا مسترد کیے جانے کے خلاف اپیلوں کی سماعت ہوئی۔الیکشن کمیشن آف پاکستان کی جانب سے عام انتخابات کیلئے 25 جولائی کی تاریخ کا اعلان کیا گیا ہے، جس کے بعد تمام سیاسی اور مذہبی جماعتوں کی جانب سے بھرپور مہم کا آغاز ہو چکا ہے۔ کاغذات نامزدگی جمع کرانے کے بعد عام انتخابات میں حصہ لینے کے خواہش مند امیدواروں کے کاغذات نامزدگی منظور یا مسترد ہونے کے خلاف اپیل دائر کرنے کی مدت بھی اختتام پذیر ہوگئی۔ ملک بھر میں 21 ٹریبونلز ریٹرننگ افسران نے اپیلوں کے فیصلے سنے۔دوسری جانب الیکشن کمشین کی جانب سے عام انتخابات میں سیکیورٹی کیلئے فوج کی خدمات لینے کی درخواست بھی منظور کرلی گئی ہے، جس کے بعد عام انتخابات کے لیے ساڑھے تین لاکھ فوجی اہلکار کی خدمات لی جائیں گی، جس میں 2 برسوں کے دوران ریٹائرڈ ہونے والے اہلکاروں کو بھی شامل کیا جائے گا۔ فوجی اہل کاروں کا تعلق تینوں مسلح افواج سے ہوگا۔بیلٹ پیپرز کی چھپائی اور ترسیل بھی فوج کی نگرانی میں کی جائے گی اور پاک فوج کے اہلکار 27 جون کو پرنٹنگ پریس کی سیکیورٹی سنبھال لیں گے۔عام انتخابات میں پولنگ سے 4 روز قبل فوج کو بلایا گیا ہے، پاک فوج کے اہلکار پولنگ اسٹیشن کے اندر اور باہر تعینات ہوں گے جب کہ انتہائی حساس پولنگ اسٹیشنوں پر اہلکاروں کی اضافی نفری تعینات کی جائے گی۔یہاں یہ بات بھی قابل ذکر ہے کہ الیکشن کمیشن آف پاکستان کی جانب سے جاری مراسلے کے مطابق سیاسی مہم اور انتخابات میں حصہ لینے والے امیدواروں کے علاوہ سیاسی جماعتوں کے قائدین کو سیکیورٹی فراہم کرنے کیلئے چیف سیکریٹریز کو حکم دیا گیا ہے، جب کہ ملک بھر کے انتہائی حساس پولنگ اسٹیشنز پر سی سی ٹی کیمرے جلد لگائے جائیں، الیکشن کمیشن کے دفاتر، انتخابی عملہ کو بھی سیکیورٹی دی جائے۔ ڈسٹرکٹ ریٹرننگ افسران، ریٹرننگ افسران، اسٹنٹ ریٹرننگ افسران کو سکیورٹی دی جائے، عام انتخابات کے صاف شفاف انعقاد کے لئے سیکیورٹی کے بہترین انتظامات کئے جائیں۔


Get real time updates directly on you device, subscribe now.

اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

Translate »