پوری قوم امریکہ کے خلاف سراپا احتجاج

لاہور : مسلمانوں کے قبلہ اول کو اسرائیلی دارالحکومت تسلیم کرنے کے امریکی فیصلے کے خلاف مذہبی جماعتوں ملک گیر احتجاج اور ریلیاں نکالنا شروع کردیں ۔ جماعت اسلامی ، جے یو آئی ف اور تحریک لبیک یا رسول اللہ سمیت مختلف مذہبی جماعتوں نے نماز جمعہ کی ادائیگی کے بعد امریکی فیصلے کے خلاف ریلیاں شرو ع کردی ہیں ۔
اد ھر لاہور میں طلبہ تنظیم نے امریکی صدر کے فیصلے کے خلاف امریکی قونصلیٹ کے باہر احتجاج کیا اور امریکا مخالف نعرے بازی کی۔مظاہرین نے مطالبہ کیا کہ بیت المقدس کو اسرائیل کا دارالخلافہ تسلیم کرنےکا اعلان واپس لیا جائے، اگر اعلان واپس نہ لیا گیا تو احتجاج کا سلسلہ جاری رکھیں۔پولیس نے طلبہ تنظیم کے احتجاج کے باعث سیکیورٹی خدشات کے پیش نظر امریکی قونصلیٹ کے راستے سیل کردیئے، قونصلیٹ کے گرد کنٹینرز کھڑے کرکے پولیس کی بھاری نفری تعینات کردی گئی۔اسلام آباد بار کونسل کی جانب سے بھی امریکی فیصلے کے خلاف احتجاج کیا گیا جس میں وکلا کی بڑی تعداد نے ایف ایٹ کچہری میں احتجاج کیا اور امریکا کےخلاف شدید نعرے بازی کی۔پشاور میں جماعت اسلامی اور جے یو آئی ف کی ریلیوں کا سلسلہ جاری ہے ۔جماعت اسلامی کے امیر سراج الحق کا کہنا ہے کہ ٹرمپ کا القدس کو اسرائیلی دارالحکومت قراردینا جلتی پر تیل ڈالنے کے مترادف ہے، ڈونلڈ ٹرمپ نے عالمی امن کو خطرے میں ڈال دیا ہے، مسلم حکمران متحد ہوکر امریکی فیصلے کے خلاف لائحہ عمل دیں۔ادھر فضل الرحمن نے ٹرمپ کی طرف سے قبلہ اول بیت المقدس کو ا سرائیل کادارالحکومت تسلیم کرنے کے اعلان کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے اس کو مسلمانوں کے جذبات سے کھیلنے کے مترادف قرار دیا۔
ادھر اہل سنت جماعتوں کے گرینڈ الائنس نظام مصطفی متحدہ محاذ نے ملک گیر یوم القدس منارہی ہیں۔ جمعہ کے اجتماعات میں امریکی صدر کے اعلان کے خلاف قراردادیں منظور کی گئیں۔ پاکستان علما کونسل کے چیئرمین حافظ محمد طاہر محمود اشرفی نے القدس کو اسرائیلی دارالحکومت تسلیم کرنے کے فیصلے کی شدید الفاظ میں مذمت کی اور ان کی جانب سے لبیک یا اقصیٰ کے عنوان سے یوماحتجاج منایا جا رہا ہے۔جماعت اسلامی کے تحت ملک بھر کی طرح کراچی میں بھی احتجاج کیا جا رہا ہے۔ نماز جمعہ کے بعد مساجد کے باہر مظاہرے ہو رہے ہیں۔ مرکزی مظاہرہ بنارس چوک پر جاری ہے جہاں جماعت اسلامی کراچی کے امیر انجینئر حافظ نعیم الرحمن، نائب امیر کراچی محمد اسحاق خان اور ضلع غر بی کے امیر عبد الرزاق خان بھی شریک ہیں۔تحریک لبیک یارسول اللہ کے امیر علامہ خادم حسین رضوی کی ہدایت پرمرکز تحریک لبیک جامع مسجد بہار شریعت بہادرآباد سے ریلی نکالی رہی ہے۔ مجلس وحدت مسلمین کے سربراہ علامہ راجہ ناصر عباس جعفری کی اپیل پر ملک بھر کی طرح سندھ بھر میں بھی یوم مردہ باد امریکہ منایا جارہا ہے۔ ایم ڈبلیوایم سندھ کے سیکریٹری جنرل علامہ مقصود علی ڈومکی نے ہنگامی اجلاس کے دوران کہا کہ بیت المقدس مسلمانوں کا قبلہ اول ہے۔ اس کے خلاف کسی بھی سازش کو مسلمانوں کے خلاف اعلان جنگ سمجھا جائے گا۔


اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.