Daily Taqat

جہانگیر ترین کے بعد پی ٹی آئی رہنما علیم خان نے نااہل ہونے کے قریب

جسٹس عظمت سعید شیخ ای او بی آئی سے متعلق کیسز سن رہے ہیں۔اور ای او بی آئی میں 40بلین روپے کا اسکینڈل سامنے آیا تھا جس کا سابق چیف جسٹس افتخار چوہدری کے زمانے میں نوٹس بھی لیا گیا تھا۔اور ایک رپورٹ کے مطابق 2022ء کے بعد ای او بی آئی کے پاس پنشنرز کو پینشن دینے کے بھی پیسے نہیں ہوں گے۔ اور اب ایف آئی اے کی ایک رپورٹ کے مطابق ای او بی آئی میں 18کیسز درج ہوئے ہیں

اور ان میں 32ملزمان ملوث تھے جن میں 7ملزمان کو اشتہاری قرار دیا جا چکا ہے۔اور ملزمان کی فہرست میں سے بڑے ملزم پی ٹی آئی چئیرمین عمران خان کی اے ٹی ایم یعنی کہ علیم خان کا نام شامل ہے۔اور علیم خان اس اسکینڈل میں ایک بڑے نام کے طور پر سامنے آئے ہیں۔جب کہ پی ٹی آئی رہنما علیم خان نے اس وقت اپنی ضمانت بھی کروائی ہوئی ہے۔اور اس کے علاوہ پی آئی او بی سکینڈل میں ڈائیریکٹر پاک ہاؤسنگ سکیم لاہور عمار احمد خان کا نام بھی شامل ہے۔جو سینیٹر گلزار احمد کے بیٹے بھی ہیں۔


Get real time updates directly on you device, subscribe now.

اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

Translate »