Daily Taqat

کاشتکاروں سے زیادتی کسی صورت برداشت نہیں کی جائے گی:لاہور ہائیکورٹ

لاہور ہائیکورٹ نے گنے کے سیزن میں شوگر ملز کی بندش کے خلاف دائردرخواستوں پر فریقین کے دلائل مکمل پر فیصلہ محفوظ کر لیا ۔عدالت نے قرار دیا کہ کاشتکاروں سے زیادتی کسی صورت برداشت نہیں کی جائے گی ۔جسٹس ساجد محمود سیٹھی نے ایک ہی نوعیت مختلف درخواستوں پر سماعت کی جن میں شوگر ملز کی بندش اور گنے کی180 روپے کی بجائے 120 روپے فی من ادائیگی کے اقدامات کو چیلنج کیا گیاتھا، درخواست گزار کسانوں کے وکلا ءنے بتایا کہ نہ تو تمام شوگر ملیں کھولی گئیں اور نہ 180 روپے فی من گنے کا ریٹ دیا جارہا ہے، وکلا ءنے نشاندہی کی کہ قانون کے تحت شوگر ملز مالکان اکتوبر سے ملز چلانے کے پابند ہیں لیکن شوگر ملز بند پڑی ہیں، وکلاءنے بتایا کہ شوگر ملز نہ چلنے سے گنے کے کاشتکاروں کا شدید نقصان ہو رہا ہے، درخواست گزار وکلا ءنے استدعا کی کہ شوگر ملز کو فعال کرنے اور گنے کی قیمت 180 روپے مقرر کرنے کا حکم دے دیا جائے. عدالتی حکم پر کین کمشنر پنجاب اور شوگر ملزکے نمائندے عدالت میں پیش ہوئے ،پنجاب حکومت کی جانب سے موقف اختیار کیا گیا کہ تمام ملیں کھل چکی ہیں اور گنے کے کاشتکاروں کو 180 روپے فی من گنے کا معاوضہ یقینی بنانے کے لئے اقدامات کئے جارہے ہیں جبکہ وزیراعلیٰ پنجاب ملیں بند کرنے والے مالکان کے خلاف کارروائی کا حکم بھی دے چکے ہیں، دوسری جانب کاشتکاروں کی جانب سے ملیں نہ کھلنے اور 180 روپے فی من گنے کا ریٹ نہ ملنے سے متعلق بیان خلفی بھی عدالت میں جمع کروا چکے ہیں عدالت نے فریقین کے دلائل مکمل ہونے پر فیصلہ محفوظ کر لیا۔


Get real time updates directly on you device, subscribe now.

اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

Translate »