ایم ایل ون منصوبہ میری زندگی کا مشن تھا، شیخ رشید

اسلام آباد: وزیر ریلوے شیخ رشید احمد کا کہنا ہے کہ ایم ایل ون منصوبے کی تکمیل میری زندگی کا مشن تھا، ایم ایل ون ٹریک سے سسٹم خودکار ہوجائے گا۔

اسلام آباد میں پریس کانفرنس کے دوران شیخ شید نے کہا کہ موجودہ ریلوے ٹریک پر آئے روز حادثات ہوتے ہیں، ایم ایل ون منصوبے کی تکمیل میری زندگی کا مشن تھا، ایم ایل ون ٹریک سے سسٹم خودکار ہوجائے گا، ایکنک نے کراچی سے پشاور تک ڈبل ٹریک منظور کیا ہے، منصوبے میں 90 فیصد مزدور پاکستان سے ہی ہوں گے۔

ایم ایل ون ٹریک سے سفر کا دورانیہ کم ہوجائے گا، اس سے ٹرینوں کی تعداد 34 سے بڑھ کر 146 ہوسکیں گی، ایم ایل ون منصوبے پر بھی اسی سال کام شروع ہوجائے گا، ایک ٹینڈر کرنے پر 3 سال میں ایم ایل ون منصوبہ مکمل ہوجائے گا، 2 ٹینڈرز پر ساڑھے 3 اور 3 ٹینڈرز پر 5 سال لگیں گے۔

وزیر ریلوے نے کہا کہ انشااللہ عمران خان 5 سال مکمل کریں گے، نیب آزادادارہ ہے کسی کو بھی طلب کرسکتا ہے، ہمارے لوگوں کو بھی طلب کیا جاسکتا ہے، اگلے 4 سے 5 ماہ بہت اہم ہیں، اپوزیشن کا جلد مطالبہ ہوگا کہ نیب ختم کرو لیکن ہم عمران خان کے ساتھ ہیں، اس ماہ اے پی سی نہ ہوئی تو اگلے ماہ محرم شروع ہوجائے گا۔

وزیر ریلوے کا کہنا تھا کہ اس اپوزیشن میں وہ دم نہیں جو بنیادی ضرورت ہوتی ہے، اس اپوزیشن کو سہولتیں اور رعایتیں چاہئیں، شہبازشریف اور حمزہ شہباز پر سخت الزامات ہیں، انہیں تعویز دھاگے کا کام کرنا چاہیے، آصف زرداری کو کوئی فکر نہیں، انہوں نے کرمنل پروسیجر میں پی ایچ ڈی کررکھی ہے، آصف زرداری نے پریس کانفرنس کے لئے بیٹے کو رکھا ہوا ہے۔


اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.