اسحاق ڈار کو گرفتار کر کے پاکستان واپس لانے کے لیے انٹرپول سے رابطہ کرنے کا فیصلہ

قومی احتساب بیورو نے وفاقی وزیر خزانہ اسحاق ڈار کو لندن میں گرفتار کر کے پاکستان واپس لانے کے لیے انٹرپول سے رابطہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

اس بات کا فیصلہ نیب کے چیئرمین جسٹس ریٹائرڈ جاوید اقبال کی سربراہی میں نیب کے ایگزیکٹیو بورڈ کے اجلاس میں کیا گیا۔اجلاس میں کہا گیا کہ وزیر خزانہ اسحاق ڈار کو ایسی کوئی بیماری نہیں ہے جس کا علاج پاکستان میں ممکن نہ ہو۔نیب نے سپریم کورٹ کے حکم پر ملزم اسحاق ڈار پر معلوم ذرائع آمدن سے زیادہ اثاثے بنانے کا ریفرنس دائر کیا ہے۔


اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.