پاکستان اور بھارت کے درمیان جوہری ہتھیاروں کی فہرستوں کا تبادلہ

پاکستان اور بھارت کے درمیان معاہدے کے تحت جوہری ہتھیاروں کی فہرست کا تبادلہ کیا گیا۔
دفتر خارجہ کی جانب سے جاری اعلامیے کے مطابق دونوں ممالک کے درمیان 31 دسمبر 1988 کے معاہدے کے تحت ہر سال یکم جنوری کو جوہری تنصیبات سے متعلق فہرستوں کا تبادلہ کیا جاتا ہے اور اس بار یہ فہرستوں کے تبادلے کا 27 واں موقع تھا۔
دفتر خارجہ کے مطابق دونوں ملکوں کی وزارت خارجہ نے اسلام آباد اور نئی دہلی میں فہرستوں کا تبادلہ کیا، نئی دہلی میں پاکستانی ہائی کمیشن کو بھارتی حکام نے جوہری تنصیبات سے متعلق فہرست فراہم کی جب کہ پاکستان نے اسلام آباد میں بھارتی ہائی کمیشن میں فہرست دفتر خارجہ کے نمائندے کے حوالے کی۔دفتر خارجہ کا کہنا ہے کہ فہرستوں کے تبادلے کا مقصد جوہری تنصیبات کا ہر ممکن تحفظ یقینی بنانا ہے۔


اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.