Daily Taqat

روسی وزیر دفاع نے ملکی تاریخ کی سب سے بڑی فوجی مشقوں کا اعلان کردیا

روسی وزیر دفاع سرگئی شائیگو نے روسی تاریخ کی سب سے بڑی فوجی مشقوں کا اعلان کر دیا۔ مشقوں میں چین اور منگولیا کی فوجیں بھی حصہ لیں گی۔ روس نے آئندہ ماہ سوویت یونین کے خاتمے کے بعد سے اب تک کی سب سے بڑی فوجی مشقیں کرنے کا اعلان کیا ہے۔ روس کے وزیر دفاع سرگئی شوئیگو نے فوجی مشقوں کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ ان میں چین اور منگولیا کی فوجیں بھی حصہ لیں گی۔

ووستوک 2018 مشقیں روسی افواج کے مرکزی اور مشرقی علاقوں میں منعقد ہوں گی، جن میں تین لاکھ فوجی، ایک ہزار جہاز، دو روسی بحری بیڑے اور ان سے ملحقہ تمام ہوائی یونٹ شریک ہوں گے۔ روسی وزیر دفاع شائیگو  کا کہنا ہے کہ اگلے ماہ ہونے والی فوجی مشقیں 1981 میں سوویت فوجی مشقوں زاپیڈ کے بعد سب سے بڑی فوجی مشقیں ہوں گی، یہ سب کچھ بلاشبہ جنگ کے قریب ترین کا ماحول ہوگا۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ جنگ زدہ ملک شام، ماسکو کی مدد سے تعمیر نو کے کام کے بعد دس لاکھ پناہ گزینوں کی واپسی کیلئے تیار ہے۔ ووستوک 2018 مشقیں 11 ستمبر سے 15 ستمبر تک جاری رہیں گی۔


Get real time updates directly on you device, subscribe now.

اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

Translate »