کھلاڑیوں کو جنسی طور پر ہراساں کرنے والے ڈاکٹر کو 175سال قید

امریکی جمناسٹکس ٹیم کے سابق ڈاکٹر لیری نیسر کو جنسی استحصال کے مقدمے میں 175 برس قید کی سزا سنا دی گئی ہے۔غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق جنسی استحصال کے ایک کیس میں امریکی مناسٹکس ٹیم کے سابق ڈاکٹر لیری نیسر

کو جنسی استحصال کے مقدمے میں 175 برس قید کی سزا سنا دی گئی ہے۔ عدالت میں گزشتہ سات روز تک متاثرین کی گواہیاں لی گئی اور پھر نیسر کو عدالت میں بولنے کا موقع دیا گیا۔جج کا اپنے فیصلے میں کہنا تھا کہ نیسر کو سزا دینا میرے لیے اعزاز کی بات ہے کیونکہ وہ یہ حق نہیں رکھتے کہ کبھی بھی اس جیل سے باہر گھوم پھر سکیں۔ میں اپنے کتے کو بھی ان کے پاس نہیں بھیجوں گی۔ڈاکٹر لیری نیسر کی جانب سے عدالے میں معافی کی اپیل دائر کروائی گئی تھی لیکن جج نے اسے بدیانتی قرار دیتے ہوئے مسترد کر دیا اور کہا کہ وہ اب باقی ماندہ زندگی اندھیرے میں گزاریں گے۔دوسری جانب مشی گن سٹیٹ یونیورسٹی کی صدر نے بھی عدالتی فیصلے کے بعد اپنے عہدے سے استعفیٰ دے دیا ہے۔ یونیورسٹی کی صدر لو اینا سیمن پر اس کیس کی وجہ سے کافی دباؤ تھا ڈاکٹر نیسر ان کی یونیورسٹی میں 1997 سے 2016 تک پڑھاتے رہے ہیں۔


اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.