Latest news

گرفتار ایم کیو ایم کے سربراہ الطاف حسین نے پولیس کے آگے زبان بند کرلی

بانی ایم کیوایم الطاف حسین نے دوران تفتیش برطانوی پولیس کو کسی بھی سوال کا جواب دینے سے انکار کر دیا۔واضح رہےجرائم پر اُکسانے اور اس کی معاونت کرنے کے شبہے میں لندن میں گرفتار بانیٔ ایم کیو ایم الطاف حسین پر فرد جرم عائد کرنے یا نہ کرنے کا فیصلہ آج کیا جانا تھا۔پرفیکٹ باڈی پلس دبلے پتلے کمزور افراد متوجہ ہوں دبلاپن کمزوری ختم کیجئے اور خوبصورت نظر آئے وہ بھی بغیر کسی نقصان کے پرفیکٹ باڈی پلس ایسا ہربل فارمولا ہے جس کو چھوڑنے کے بعد آپ پہلی والی پوزیشن پر واپس نہیں آئیں گے ہماری سالوں سال محنت سے تیار شدہ پرفیکٹ باڈی پلس استعمال کریں اور باڈی میں اضافہ کریں صرف 999 روپے اب گھر بیٹھے آرڈر کریں  بانی ایم کیوایم الطاف حسین سے برطانوی پولیس نے دو گھنٹے تک تفتیش کی جس میں انہوں نے صرف اپنا نام، تاریخ پیدائش اور گھر کا پتا پولیس کو کنفرم کیا۔دورانِ تفتیش الطاف حسین کے وکلا بھی ان کے ساتھ تھے۔بانی ایم کیوایمکی24گھنٹےکیلئےحراست کاوقت پوراہونے کے بعدلندن پولیس نے بانی ایم کیوایم کومزید12گھنٹےحراست میں رکھنےکی درخواست دی تھی۔الطاف حسین کی 24 گھنٹے کے لیے حراست کا وقت پورا ہونے کے بعد انہیں مزید حراست میں رکھا جائے گا جس کے لیے درخواست ساؤتھ ورک پولیس اسٹیشن کے سپرنٹنڈنٹ نے دی ہے۔یاد رہے کہ متحدہ قومی موومنٹ کے بانی الطاف حسین کو گزشتہ روز صبح سویرے لندن میں ان کی رہائش گاہ پر چھاپہ مار کر گرفتار کر لیا گیا جس کے بعد انہیں مقامی پولیس اسٹیشن منتقل کر دیا گیا تھا۔بانی ایم کیو ایم کی رہائش گاہ پر چھاپے میں 15 پولیس افسروں نے حصہ لیا تھا، الطاف حسین کی گرفتاری ممکنہ طور پر 2016ء کی نفرت انگیز تقریر پر کی گئی ہے۔


اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.