میرے والد کا قاتل اور کوئی نہیں ،بلکہ ایران ہے۔ سابق صدر علی عبداللہ صالح کے بیٹے احمد صالح کا انکشاف

چند روز پہلے قتل کئے جانے  والے یمن کے سابق صدر علی عبداللہ صالح کے بیٹے احمد صالح نے کہا ہے کہ  میرے والد کے قتل کا ذمہ دار کوئی اور نہیں بلکہ ایران ہے۔   اور میں اپنے والد کے قتل کا حصاب ایران سے لے کر رہوں گا۔
سابق مقتول صدر علی صالح کے بیٹے نے کہا کہ ان کے والد کو اس لیے قتل کیا گیا کیونکہ وہ ایرانی ایجنٹوں کے سامنے ڈٹ گئے تھے ۔ جنرل احمد صالح نے کہا کہ ایرانی ایجنٹ تین سال سے یمن میں فساد پھیلا رہے ہیں، علی صالح نے یمن میں ایران کو فساد پھیلانے سے روکنے کی کوشش کی تو انہیں قتل کردیا گیا۔ ان کا کہنا تھا کہ میرے والد کا قتل ایران کے لیے تباہی کا موجب بنے گا۔واضح رہے کہ گزشتہ روز  شدت پسندوں نے یمن کے سابق صدر عبداللہ صالح کو گزشتہ روز ایک بڑا حملہ کر کے قتل کیا ۔


اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.