Daily Taqat

اسرائیلی فوج کی ریاستی دہشت گردی میں 6 فلسطینی شہید اور 21 زخمی

بیت المقدس: مقبوضہ مغربی کنارے میں اسرائیلی فوج نے چھاپہ مار کارروائیوں کے بہانے فلسطینیوں پر ظلم کے پہاڑ توڑ دیئے، جارحیت پسند فوج نے اندھا دھند فائرنگ کرکے 6 نوجوانوں کو شہید اور 21 کو زخمی کردیا۔

عالمی خبر رساں ادارے کے مطابق قابض اسرائیلی فوج نے مقبوضہ مغربی کنارےکے علاقے نابلس میں سرچ آپریشن کے دوران گھر گھر چھاپے مارے اور متعدد فلسطینی نوجوانوں کو گرفتار کرلیا۔

اسی دوران اسرائیلی فوج نے ایک مقام پر اندھا دھند فائرنگ کردی جس کے نتیجے 6 فلسطینی نوجوان شہید اور 21 زخمی ہوگئے۔ شہید اور زخمی ہونے والوں کی عمریں 14 سے 34 سال کے درمیان ہے اور یہ سب نہتے تھے۔

فلسطین کی وزارت صحت کی جانب سے جاری بیان میں بتایا گیا ہے کہ زخمی ہونے والوں میں سے 4 کی حالت تشویشناک ہے۔ قابض فوج نے گولی لگے نوجوانوں کو مرنے کے لیے سڑک پر چھوڑ دیا۔ اگر بروقت لایا جاتا تو نوجوانوں کی جانیں بچائی جا سکتی تھیں۔

دوسری جانب اسرائیل کے وزیراعظم یائر لیپڈ نے بتایا کہ فوجی کارروائی میں فلسطینی جنگجوؤں کے نئے اتحاد ’عرین الاسود‘ کے سربراہ ودیع الحوح اور ان کے ساتھیوں کو ہلاک کیا گیا۔

اسرائیلی فوج نے دعویٰ کیا کہ پولیس اور انٹیلیجنس اہلکاروں کی مدد سے ’عرین الاسود‘ کے اسلحہ چلانے کی تربیت گاہ کو نشانہ بنایا جہاں سے تربیت یافتہ جنگجوؤں نے اسرائیلی سرزمین پر حملوں میں متعدد یہودی آبادکاروں کو چاقو کے وار کرکے قتل کیا تھا۔

اسرائیلی فوج کی اس کھلی جارحیت پر بڑی تعداد میں سیکڑوں فلسطینی شہری سڑکوں پر نکل آئے اور اسرائیلی فورسز کے مظالم کے خلاف شدید احتجاج کیا۔

واضح رہے کہ فلسطین پر 1967 سے اسرائیل جبری طور پر قابض ہے اور آزادی کی جدوجہد کو کچلنے کے لیے طاغوتی ہتھکنڈے استعمال کر رہا ہے۔ رواں برس فوجی کارروائیوں میں 100 سے زائد فلسطینی شہید ہوچکے ہیں۔


Get real time updates directly on you device, subscribe now.

اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

Translate »