بھارت انگنت مسائل سے دوچار

گزشتہ چھ برس میں بھارت کے 70جنگی طیارے اور ہیلی کاپٹر تباہ ہوئے جن میں80افراد مارے گئے۔

مختلف ممالک میں گزشتہ تین سال میں31ہزار سے زائد بھارتی شہریوں کی موت واقع ہوئی، مختلف ممالک کی جیلوں میں ساڑھے پندرہ ہزار بھارتی شہری بند ہیں ، بھارتی حکومت کی طرف سے یہ اعداد وشمار پارلیمان میں پیش کیے گئے۔

حکومت نے پارلیمنٹ کو بتایا کہ بھارتی مسلح افواج کے2014 سے اب تک گیارہ ہیلی کاپٹرز سمیت 35طیارے حادثات کا شکار ہوکر تباہ ہوئے جن میں14پائلٹ مارے گئے۔

اگر بھارتی فوج،بحریہ اور فضائیہ کے طیاروں کو پیش آنے والے حادثات کے اعدادو شمار کا جائزہ2011سے لیا جائے تو مجموعی طور پر 70طیارے اور ہیلی کاپٹر تباہ ہوئے جن میں80افراد ہلاک ہوئے ۔

ان تباہ ہونے والے طیاروں میں30سے زائد جنگی طیارے تھے جن میں5 ٹوئن انجن سخوئی طیارے بھی شامل ہیں۔ملٹری طیاروں کے حادثات کی یہ شرح غیرمعمولی ہے، ان طیاروں کی تباہی کی دو اہم وجوہات ’تکنیکی خرابی‘ اور’انسانی غلطی‘ کوقرار دیا جاتا ہے۔

رپورٹ کے مطابق بھارتی مسلح افواج ستر کی دہائی کے پرانے چیتا ہیلی کاپٹرز کو فوری تبدیل کرکے ان کی جگہ نئے484لائٹ ہیلی کاپٹر لینا چاہتی ہےمگر بھارت اور روس کے درمیان تقریباً ایک ارب ڈالر کے200ہیلی کاپٹرز کامعاہدہ طویل عرصے سے التوا کا شکار ہے۔دیگر ممالک سے197ہیلی کاپٹرز کے معاہدے بھی تین بار منسوخ کیے گئے۔

لوک سبھا میں ایک اور سوال کے جواب میں بتایا گیا کہ2014سے غیر ممالک میں31318بھارتی شہریوں کی موت ہوئی۔

ایک سو چھ ممالک میں بھارتی شہریوں کی اموات کا ذکر کرتے ہوئے بتایا گیا کہ بھارتیوں کی سب سے زیادہ اموات سعودی عرب میں ہوئیں جن کی تعداد دس ہزار ہےجبکہ متحدہ عرب امارات میں چھ ہزار اور پاکستان میں8 بھارتی شہریوں کی اموات ہوئیں۔

دنیا بھر کی جیلوں میں بھارتی قیدیوں کی تعداد کے بارے میں بتایا گیا کہ 2015سے دنیا کی مختلف جیلوں میں15405بھارتی شہری بند ہیں۔سب سے زیادہ بھارتی قیدی سعودی عرب کی جیلوں میں ہیں جن کی تعداد5590جبکہ پاکستان میں قید بھارتیوں کی تعداد1132ہے۔


اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.