راجہ ظفر معروف کے بھارت کے بارے میں اہم انکشافات

آل جموں وکشمیر مسلم کانفرنس کے مرکزی نائب صدر سابق امیدوار قانون ساز اسمبلی حلقہ ایل اے چار کھڑی شریف راجہ ظفر معروف نے کہا ہے کہ5فروری کوآل جموں وکشمیر مسلم کانفرنس کے کارکنان اور پوری قوم یوم یکجہتی کشمیربھرپور انداز میں منائیں گے آل جموں وکشمیر مسلم کانفرنس شہیدا کے مشن کی وارث سیاسی جماعت ہے بھارت نے طاقت کے بل بوتے پر غیر قانونی ،غیر اخلاقی اور غیر آئینی طور پر کشمیر کے بڑے حصہ پر غاصبانہ و جابرانہ قبضہ کر رکھا ہے 5فروری کے دن کو یوم یکجہتی کشمیر کو بھرپور انداز میں منائینگے آل جموں وکشمیر مسلم کانفرنس اس وقت تک چین سے نہیں بیٹھے گی جب تک اس پار کے کشمیری بھارت سے مکمل آزادی حاصل کرکے پاکستان سے الحاق نہیں کر پاتے مسئلہ کشمیر اس وقت تک حل نہیں ہو سکتا جب تک کشمیریوں کو مزاکراتی عمل میں شامل نہیں کیاجاتا اور ان کی خواہشات کا احترام نہیں کیاجاتا اگر مسئلہ کشمیر کو کشمیریوں کی خواہشات کے مطابق حل نہ کیاگیا تو مسئلہ کشمیر کا دیرپا حل برآمد نہیں ہو گابھارت مسئلہ کشمیرحل کرنے میں کبھی مخلص نہیں رہا سابق امیدوار قانون ساز اسمبلی حلقہ ایل اے چار کھڑی شریف راجہ ظفر معروف نے کہا کہ پاکستان کو اپنی خارجہ پالیسی پر نظر ثانی کرنا ہوگی تحریک آزادی کشمیر کشمیریوں مسلمانوں کی قربانی کے نتیجے میں آخری مراحل میں داخل ہو چکے ہیں انشااللہ وہ دن دور نہیں جب کشمیری بھارت سے مکمل آذادی حاصل کرلیں گے اور پاکستان کے ساتھ الحاق کرکے تکمیل پاکستان کریں گے بھارت نام نہاد یوم جمہوریہ منا کر اقوام عالم کی آنکھوں میں دھول جھونک رہا ہے اور اس سے بڑا مذاق و دہشت گردی اور کیا ہو سکتی ہے کہ مظلوم کشمیریوں کے قاتلوں اور نہتے لوگوں سے ظالمانہ سلوک روا رکھنے والے بھارتی فوجیوں کو آج تمغوں سے نوازا جا رہا ہےگرد ملک کے طور پر نقشہ میں اپنی پہچان بنا رہا ہے۔

بھارتی فوجی لاکھوں کشمیریوں کے قتل عام کے مجرم ہونے کی بنا پر پھانسی کے حقدار ہیں آل جموں وکشمیر مسلم کانفرنس کے مرکزی نائب صدر سابق امیدوار قانون ساز اسمبلی حلقہ ایل اے چار کھڑی شریف راجہ ظفر معروف نے کہا ہے کہ نریندر مودی ایک سفاک اور دہشت گرد وزیراعظم ہے جو خطے کے امن کیلئے ایک بہت بڑا خطرہ بن چکا ہے اس کی جارحانہ پالیسیوںکی وجہ سے جنوبی ایشیاء کے عوام میں عدم تحفظ کی فضاء قائم ہو رہی ہے ۔ جبکہ نریندر مودی جب سے وزیراعظم بنا ہے یہ ایک مخصوص سوچ کی بناء پر مسلمانوں کی نسل کشی کر رہا ہے جس پر عالمی حقوق کی تنظیموں کو اپنی آواز بلند کرنی چاہیے ۔


اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.