اہم خبرِیں
افغانستان میں تعینات جارجیا کے 28 فوجی کرونا وائرس میں مبتلا ملک میں کورونا وائرس کے 2751 نئے کیسزرپورٹ، 75 مریض جاں بحق بھارت اپنے دفاع پر بے پناہ وسائل خرچ کررہا ہے‘اکرام سہگل سندھ حکومت کی جانب سے پہلی بار باقاعدہ طور پر تھانوں کا بجٹ من... چینی اور کھانے کی دیگر اشیاء کی قیمتوں میں روز بروز اضافہ نیپال نے بھارتی پروپیگنڈا کے رد عمل میں ملک میں تمام بھارتی چی... امریکی محکمہ خارجہ کی جانب سے جاپان کو 23 ارب ڈالر کے 105 ایف ... ڈریکولا اصل میں کون تھا، حقیت یا آفسانہ؟ مولانا فضل الرحمان کی بلاول بھٹو زرداری اور آصف علی زرداری سے ... سشانت سنگھ کے بعد اب ایک اور بھارتی اداکار کی خودکشی میڈیا کو پھانسی دینی چاہیے، نعمان اعجاز کا ڈرامہ انڈسٹری پر غص... معروف کامیڈین اور اداکارہ روبی انعم کو دل کا دورہ، اسپتال منتق... پی سی بی کا سلیم ملک اور سابق لیگ اسپنر دانش کنیریا پر عائد پا... کھلاڑیوں کوخود ہی ایک دوسرے کی حوصلہ افزائی کرنی ہو گی، مشتاق ... ویسٹ انڈیز کے مایہ ناز فاسٹ بولر مائیکل ہولڈنگ نسلی تعصب پر با... اعلیٰ ترک عدالت نے 'آیا صوفیہ' کی میوزیم کی حیثیت ختم کر دی 8 پولیس اہلکاروں کے قتل میں ملوث گینگسٹر انکاؤنٹر میں ہلاک چینی برانڈ 'شین' کی جائے نماز کو سجاوٹی قالین فروخت کرنے پر مع... الیکشن سے پہلے جھاڑو پھر جائے گا، شیخ رشید سینیٹر سرفراز بگٹی کے ناقابل ضمانت وارنٹ گرفتاری جاری

پوری دنیا میں آج ہاتھ دھونے کا عالمی دن منایا جارہا ہے

پاکستان سمیت دنیا بھر میں ہاتھ دھونے کا عالمی دن (گلوبل ہینڈ واشنگ ڈے) آج منایا جارہا ہے۔عالمی سطح پر یہ دن منانے کا مقصدلوگوں میں ہاتھ نا دھونے کے سبب جنم لینے والے بیماروں سے آگاہ کرنا ہے اور یہ بتانا ہے کہ ہاتھدھونا کیوں ضروری ہے۔دنیا بھر میں سالانہ لاکھوں افراد بیکٹریا سے پیدا ہونے والی بیماریوں سے متاثر ہوتے ہیں جسے دیکھتے ہوئے عالمی ادار ہ صحت اور یونیسیف نے 15 اکتوبر 2008 میں پہلی دفعہ ہاتھ دھونے کا عالمی دن منانے کا اعلان کیاتھا۔اس کے بعد سے ہر سال 15 اکتوبر کو یہ دن منایا جاتا ہے۔ایک رپورٹ کے مطابق صابن سے ہاتھ دھونے سے پانچ سال سے کم عمر کے بچوں میں دست و اسہال کی بیماری کی شرح 50 فیصد جبکہ سانس کے ذریعے انفکیشن کی شرح 25 فیصد تک کم کی جاسکتی ہے۔ہاتھ دھونا جراثیم سے نمٹنےاور ان سےمحفوظ رہنے کا پہلا اور سب سے آسان طریقہ ہے ۔نا صرف پانی سے ہاتھ دھونا کافی ہےبلکہ صابن کا استعمال بھی ضروری ہے۔ماہرین کے مطابق صابن کے ساتھ اچھی طرح ہاتھ دھونے سے اسہال کا خطرہ 30سے 50فیصد تک کم ہو جاتا ہے۔ جراثیم زیادہ تر کھانے پینے کے دوران انسانی جسم میں داخل ہوتے ہیںجبکہ ہاتھ، پیر اور منہ کے امراض ،جلدی انفیکشن،ہیپاٹائٹس اے، پیٹ کے امراض بھی ہاتھ نہ دھونے کی عادت کی وجہ سے ہمیں نشانہ بنا سکتے ہیں۔اسلامی معاشرے میں صفائی کی بہت اہمیت ہے اور اسے نصف ایمان کہا جاتا ہے بلکہ سائنسی نقطہ نظر سے بھی ہاتھوں کی صفائی پر بہت زور دیا گیا ہے۔اس موقع پر دنیا بھر میں مختلف سرکاری و غیر سرکاری این جی اوز کے زیر اہتمام خصوصی واکس، سیمینارز ،کانفرنسز اور دیگر تقریبات کا اہتمام بھی کیا جائیگا جن میں ہاتھ نہ دھونے کے نقصانات سے لوگوں کو آگاہ کرتے ہوئے اس جانب راغب کیا جائے گا۔


Get real time updates directly on you device, subscribe now.

اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.