سعودی جیلوں میں قید پاکستانیوں کےلئے خوشخبری

سعودی پبلک پراسیکیوٹر نے سعودی جیلوں میں قیدیوں کی تعداد کم کرنے کیلئے متعدد اقدامات کی منظوری دیدی۔ان کے بموجب نشہ آور اشیاء کے استعمال پر زیر حراست لئے جانے والے غیر ملکیوں کو رہا کرکے مملکت سے بیدخل کردیا جائیگا جبکہ 5برس سے جیلوں میں

موجود سعودیوں اور ایسے غیر ملکی ملزمان کی حراست کو منسوخ کردیا جائیگا جو نشہ آور اشیاء کے استعمال پر حراست میں لئے گئے تھے۔اس نئے قانون کے تحت مملکت کی جیلوں میں قید ہزاروں پاکستانی قیدیوں سمیت غیر ملکیوں میں کو فائدہ پہنچے کا امکان ہے ۔ تاہم ایسے قیدیوں کو فائدہ نہیں پہنچے گا جن پر منشیات کی اسمگلنگ وغیرہ کے الزامات نہ ہوں۔


اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.