چیف جسٹس سندھ ہائیکورٹ کاسول اسپتال جیکب آباد میں علاج اورادویات کی عدم دستیابی پرازخودنوٹس

چیف جسٹس سندھ ہائیکورٹ نےسول اسپتال جیکب آباد میں علاج اور ادویات کی عدم دستیابی پر از خود نوٹس لیتے ہوئے 8جنوری کو سیکریٹری صحت کوطلب کرلیا۔

ازخود نوٹس پرڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج جیکب آباد نےرپورٹ چیف جسٹس سندھ ہائیکورٹ کےروبرو پیش کردی۔

چیف جسٹس، جسٹس احمد علی ایم شیخ نے حکم دیا کہ سیکریٹری صحت خود پیش ہوکرسول اسپتال جیکب آباد سے متعلق رپورٹ پیش کریں۔

ذرائع کے مطابق چیف جسٹس نے اخبارات میں چھپنے والی خبروں پر از خود نوٹس لیا ہے۔

اخباری متن میں بتایا گیا ہے کہ سول اسپتال میں نہ توزندگی بچانے والی ادویات ہیں اور نہ ہی ماہر ڈاکٹر جبکہ اسپتال کاڈائیلیسس یونٹ بھی غیرفعال ہے۔


اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.