اہم خبرِیں
پنجاب حکومت 50 کروڑ ڈالرقرض لے گی پارک لین ریفرنس، آصف زرداری کی درخواست مسترد لڑکی کی لڑکی سے شادی کیس، دلہا کا نام ای سی ایل میں شامل بھارت میں سیکڑوں مساجد مندروں میں تبدیل نوازشریف کو سزا دینے والے جج برطرف ایم ایل ون منصوبہ میری زندگی کا مشن تھا، شیخ رشید پاکستان کا نیا نقشہ گوگل سمیت تمام سرچ انجنز کو بھجوانے کا فیص... حکومت کا ہوٹل، پارکس، سیاحتی مقامات کھولنے کا اعلان ملک میں کوروناکیسزمیں کمی، 21 اموات رپورٹ آبی ذخائر میں پانی کی آمد و اخراج کی صورتحال کلبھوشن یادیو کے معاملے پر پاکستان کا بھارت سے پھررابطہ احساس پروگرام کے تحت 169 ارب روپے تقسیم پاکستان نے سعوی عرب کا قرضہ واپس کر دیا پاکستان کو 40 کروڑ ڈالر قرضوں کی منظوری برطانوی خلائی کمپنی "سپر سانک" کمرشل طیارہ بھی بنائے گی اولڈٹریفورڈ ٹیسٹ، پاکستان 139 رنز سے اننگز آگے بڑھائے گا بیروت دھماکے، ہنگامی حالت کا نفاذ شہباز شریف اور حمزہ شہباز پر فرد جرم عائد پاکستان کی درخواست پرسلامتی کونسل کا ایمرجنسی اجلاس پاک افغان بارڈر پربھاری ہتھیاروں سے فائرنگ

بھوک بڑھنے سے 12 ہزار افراد روزانہ ہلاک ہو سکتے ہیں، رپورٹ

واشنگٹن: اگر دنیا میں بھوک و افلاس اور معاشی بدحالی کی موجودہ صورت حال جاری رہتی ہے اور اسے درست کرنے کے لئے کچھ نہ کیا گیا تو آکسفام کی ایک رپورٹ کے مطابق اس سال کے آخر تک بھوک سے روزانہ 12 ہزار افراد ہلاک ہو سکتے ہیں۔

آکسفام کے عہدے دار ایرک مونوز کا کہنا تھا کہ ان کی تنظیم نے یہ رپورٹ ورلڈ فوڈ پروگرام کے تخمینوں کی بنیاد پر تیار کی ہے جن میں کہا گیا ہے کہ اگر اس انسانی بحران کو روکنے کے لئے ابھی سے اقدامات نہ کئے گئے تو اس سال کے آخر تک مزید 12 کروڑ سے زیادہ لوگ شدید بھوک کا شکار ہو سکتے ہیں۔

آکسفام نے اپنی رپورٹ میں ایسے دس مقامات کی نشاندہی بھی کر دی ہے جہاں بھوک پھیلنے کا شدید خطرہ ہے اور وہاں فوری اقدامات کی ضرورت ہے ان میں یمن، شام اور سوڈان جیسے علاقے شامل ہیں۔

رپورٹ کے مندرجات سے اتفاق کرتے ہوئے کہا گیا ہے کہ کرونا نے جس طرح معیشتوں کو تباہ کیا ہے اور غربت و افلاس میں جس قدر اضافہ کیا ہے وہ پوری دنیا کے لئے ایک چیلنج ہے۔

اس چیلنج سے نمٹنے کے لئے ان ملکوں کو جن کی معیشتیں بہتر ہیں اور اقوام متحدہ سمیت عالمی اداروں کو آگے آنا پڑے گا ورنہ پھر ساری دنیا اس بحران کی لپیٹ میں آ جائے گی۔


Get real time updates directly on you device, subscribe now.

اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.