دپیکا پاڈوکون نے فلم پدماوت کی نمائش کے لیے ممبئی کے مشہور’ سدھویانک‘ مندر کا دورہ کیا

بالی وڈ کی تاریخی فلم’پدماوت‘ کو ویسے تو 2 دن بعد ریلیز کیا جائے گا تاہم تاحال فلم کے خلاف بھارت کے مختلف شہروں میں انتہاپسندوں کی جانب سے مظاہرے جاری ہیں۔اگرچہ راجپوت کرنی سینا کے مظاہروں کے بعد فلم کی ٹیم نے ’پدماوت‘ میں تبدیلیاں بھی کیں جبکہ سپریم کورٹ نے بھی فلم پر اعتراضات کو فضول قرار دیتے ہوئے اس کی نمائش کی اجازت دی تاہم پھر بھی راجپوت کرنی سینا کے کارکنان کے مظاہرے جاری ہیں۔

ریاست ہریانہ کے شاپنگ مال میں انتہاپسندوں نے گھس کر توڑ پھوڑ کی اور لوگوں کو تشدد کا نشانہ بھی بنایا۔

ریاست راجستھان میں بھی مظاہرے دیکھے گئے جبکہ ریاستی حکومت نے’پدماوت‘ پر پابندی کے خلاف دوبارہ سپریم کورٹ میں بھی جانے کا اعلان کیا۔

علاوہ ازیں راجپوت کرنی سنیا کی 1908 خواتین نے فلم پر پابندی عائد نہ کیے جانے کے خلاف اجتماعی خود سوزی کا اعلان بھی کر رکھا ہے۔

اپنی فلم کے لیے اتنے بڑے پیمانے پر مظاہروں، احتجاج اور ہنگاموں کے بعد فلم میں ’پدمنی‘ کا کردار ادا کرنے والی دپیکا پڈوکون نے فلم کی نمائش سے قبل مندر جاکر پوجا کرنا ضروری سمجھا۔

دپیکا پاڈوکون نے ممبئی کے مشہور’ سدھویانک‘ مندر کا دورہ کیا۔مندر کے دورے میںانہوں نے فیشن ا یبل لباس پہننے کے بجائے مذہبی روایات کے مطابق لباس پہنا اور کوئی خاص میک اپ کیے بغیر مندر پہنچیں۔

دپیکا نے مندر میں پوجا کرنے کے بعد دعا بھی کی۔اداکارہ کے مندر کے دورے کے موقع پر سیکورٹی کے انتظامات انتہائی سخت کیے گئے تھے جبکہ اداکارہ کے قریب آنے کی کسی کو بھی اجازت نہ تھی۔


اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.