سجل کو بہت یاد کرتی ہوں: سری دیوی

بالی وڈ اداکارہ سری دیوی نے حال ہی میں ہونے والے زی سینے ایوارڈز میں پاکستانی اداکاروں عدنان صدیقی اور سجل علی سمیت فلم ‘مام’ کی پوری ٹیم کا شکریہ ادا کیا اور ساتھ ہی سجل کو پیغام دیا کہ وہ انہیں بہت یاد کرتی ہیں۔

گذشتہ ماہ بھارت میں زی سینے ایوارڈز کا میلہ سجایا گیا تھا جس میں سری دیوی نے فلم ’مام‘ میں بہترین اداکاری کے جوہر دکھانے پر بہترین اداکارہ کا ایوارڈ اپنے نام کیا۔

انہیں یہ ایوارڈ ان کے شوہر بونی کپور اور سدھارتھ ملہوترا نے دیا۔

اس موقع پر سری دیوی نے اپنی فلم کی پوری ٹیم کے ساتھ ساتھ پاکستانی اداکاروں عدنان صدیقی اور سجل علی کا بھی شکریہ ادا کیا۔

انہوں نے تقریب میں سجل علی کے لیے خصوصی پیغام دیا کہ وہ ان سے پیار کرتی ہیں اور انہیں بہت یاد کرتی ہیں۔

حال ہی میں سجل علی نے بھی اپنے انسٹاگرام پر سری دیوی کی ایوارڈ تقریر کی ایک ویڈیو شیئر کرتے ہوئے بہترین اداکارہ کا ایوارڈ حاصل کرنے پر مبارک باد دی اور لکھا کہ وہ بھی ان سے پیار کرتی ہیں۔

‘مام’ سجل علی اور عدنان صدیقی کی ڈیبیو بالی وڈ فلم تھی، جس کے مرکزی کرداروں میں سری دیوی، اکشے کھنہ اور نوازالدین صدیقی شامل تھے۔

واضح رہے کہ ستمبر 2016 میں اڑی حملے کے بعد ہندو انتہا پسند تنظیموں کی دھمکیوں کے بعد پاکستانی اداکاروں پر بھارتی فلم انڈسٹری میں کام کرنے پر پابندی عائد کر دی گئی تھی۔

تاہم افواہیں ہیں کہ فلم ساز و فلم نویس پنکج ڈوبے کی فلم ’لو کری ‘ (love (curryکے لیے فواد خان کو کاسٹ کرنے پر غور کیا جارہا ہے۔


اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.