یہ جمہوریت کا دور ہے اور مجھے جو صحیح لگے گا میں وہی بولوں گا: رشی کپور

 اپنے ٹویٹر پیغامات کے باعث تنقید کی زد میں رہنے والے بالی ووڈ اداکار رشی کپور کا کہنا ہے کہ میں وہ کروں گا، وہ لکھوں گا جو میرا دل چاہے گا۔اپنے ایک بیان میں رشی کپور کاکہنا تھا کہ یہ جمہوریت کا دور ہے اور مجھے جو صحیح لگے گا میں وہی بولوں گا، مجھے نہیں لگتا کسی کو میرے کچھ بھی لکھنے سے مسئلہ ہونا چاہیے۔ٹوئٹر پر ان والے ان کے جھگڑوں کی تعداد کے حوالے سے جب پوچھا گیا تو اداکار نے کہا کہ کیا فرق پڑتا ہے؟ ان مذاق اڑانے والوں کو میں اتنی اہمیت نہیں دیتا، ان کو اس وقت ایسا محسوس ہوتا ہے کہ یہ بہت اہم ہیں جب کوئی اہم شخصیت ان کو جواب دے اور میں ان کو یہ خوشی نہیں دیتا۔
اپنے ٹوئٹر اکانٹ پر صارفین کو بلاک کرنے کے حوالے سے اداکار نے کہا کہ سب کچھ ٹھیک ہے، لیکن جب کسی نے مجھے پریشان کرنا شروع کیا تو میں اسے بلاک کردیتا ہوں۔انہوں نے یہ بھی انکشاف کیا کہ وہ اپنے اکاونٹ پر اب تک 5 ہزار سے زائد افراد کو بلاک کرچکے ہیں۔


اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.