معاشرتی وتہذیبی اقدارکارشتہ اسلام سےکمزورہورہاہے, سابق ممبرقومی اسمبلی لیاقت بلوچ

لاہور:  جماعت اسلامی پاکستان کے سیکرٹری جنرل اور سابق ممبر قومی اسمبلی لیاقت بلوچ نے کہا ہے کہ معاشرتی و تہذیبی اقدار کا رشتہ اسلام سے کمزور ہورہاہے ، سماج کے اندراندر ہی پلنے والا گندا لاوا ابل کر باہر آرہاہے ، سانحہ قصور ، مردان ، سرگودھا ، کراچی کے ملزمان درندے انجام کو پہنچائے جائیں،قومی قیادت ، دانشور ، میڈیا اور پالیسی ساز فکر کریں ، ہوش کریں، ملک و ملت کو واپس اسلامی نظریاتی تہذیب کی شاہراہ پر لائیں ،عوام میں انتشار ، نفرت اور شدت پسندی کی بجائے محبت ، برداشت اور بامقصد تعلیم لائیں ۔ منصورہ میں مرکزی مشاورتی اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے لیاقت بلوچ نے کہاکہ موجودہ نازک حالات میں سیاسی جمہوری اور پارلیمانی اختلافات سے بالاتر ہو کر دور انگریز کے کالے قوانین ، ناقص اور انسانیت کے لیے تباہ کن پالیسیوں کے بجائے شرعی قوانین ، قرآن و سنت کی بالادستی ہی امن عامہ ، جان ، مال اور عزت کی ضامن ہوسکتی ہے ۔ کئی دن گزر جانے کے باوجود معصوم بچیوں سے درندگی اور وحشیانہ سلوک کرنے والے درندے گرفتار نہیں ہوئے ۔ یہ بڑا المیہ ہے ۔ لیاقت بلوچ نے کہاکہ جماعت اسلامی پوری قوم کے ساتھ مل کر کشمیر کی تحریک آزادی کے لیے یکم تا پانچ فروری یکجہتی کشمیر کے ایام منائے گی اور پانچ فروری کو اسلام آباد میں تاریخی کشمیر ریلی کا اہتمام ہوگا ۔ بھارتی جبر اور ظلم کے خلاف پاکستانی ملت کشمیریوں کے ساتھ ہے ۔دریں اثنا لیاقت بلوچ نے معروف کالم نویس ، دانشور اور شاعر منو بھائی کے گھر جاکر تعزیت اور دعائے مغفرت کی ۔ انہوں نے کہاکہ پاکستان ایک مہذب اور شائستہ انسان سے محروم ہوگیاہے ۔

 


اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.