مقبوضہ کشمیر: نوجوانوں کی شہادت پرپلوامہ میں ہڑتال، بھارت مخالف مظاہرے

سرینگر:  مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوجیوں کے ہاتھوں دو نوجوانوںکی شہادت پر جمعہ کو پلوامہ میں مکمل ہڑتال کی گئی۔فوجیوں نے شبیر احمد اور راسخ نبی کو جمعہ کو صبح سویرے سرینگر کے مضافاتی علاقے بلہامہ کھنموہ میںمحاصرے اورتلاشی کی کارروائی کے دوران شہید کیا تھا۔ شبیر احمد پلوامہ کے علاقے اونتی پورہ جبکہ راسخ نبی ترال کا رہائشی تھا۔ پلوامہ میں تمام دکانیں، کاروباری مرکز بند رہے جبکہ سڑکوں پر ٹریفک معطل تھی۔ پلوامہ کے مرن چوک ترال تاڈل میںلوگوں نے زبردست احتجاجی مظاہرے کیے۔ بھارتی فورسز نے مظاہرین کو منتشر کرنے کیلئے طاقت کا وحشیانہ استعمال کیا جس کے بعد فورسز اہلکاروںاور مظاہرین کے درمیان جھڑپیں شروع ہو گئیں جو آخری اطلاعات ملنے تک جاری تھیں۔قابض انتظامیہ نے لوگوں کو تازہ ترین صورتحال کے بارے میں ایک دوسرے کو معلومات کی فراہمی سے روکنے کیلئے پلوامہ میں موبائل انٹرنیٹ سروس بھی معطل کر دی تھی جبکہ بھارت مخالف مظاہرے روکنے کیلئے مرن چوک، راجپورہ چوک ،دالی پورہ چوک اور دیگر علاقوں میں بڑی تعداد میں بھارتی فوجی اور پولیس اہلکار تعینات کر دیے تھے۔ انتظامیہ نے ضلع پلوامہ میں تمام تعلیمی ادارے بھی بند کر دیے تھے۔


اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.