Latest news

اختیارات کا ناجائز استعمال‘شاہد خاقان کےخلاف نئی تحقیقات شروع

لاہور: نیب نے سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کے خلاف اختیارات کے ناجائز استعمال پر نئی تحقیقات شروع کردی ہے۔ نیب نے سابق وزیراعظم اور مسلم لیگ (ن) کے سینیئر نائب صدر شاہد خاقان عباسی کے خلاف اختیارات کے ناجائز استعمال پر نئی تحقیقات شروعکردی ہے، اور اس حوالے سے نیب نے وزارت خزانہ سے تمام ریکارڈ حاصل کر لیا ہے۔

نیب ذرائع کے مطابق سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے اپنی حکومت کے آخری دنوں میں شوکت حسین عباسی کو چیئرمین ایس ای سی پی تعینات کیا اور یہ تعیناتی میرٹ کے خلاف اور ذاتی تعلقات کی بنیاد پر کی گئی، اور طاہر محمود کا نوٹیفیکیشن منسوخ کروا کے شوکت حسین کو چئیرمین تعینات کر دیا گیا تھا۔

نیب ذرائع کا کہنا ہے کہ شوکت عباسی کو 11 مئی 2018 کو چئیرمین ایس ای سی پی تعینات کیا گیا، جب کہ وہ چئیرمین ایس ای سی پی کی اہلیت پر پورا نہیں اترتے تھے اور اس عہدے کے لئے شارٹ لسٹ بھی نہیں ہو ئے تھے، اس کے بعد خاقان عباسی کے دور میں شوکت حسین کو 6 ماہ میں 3 بار ترقی دی گئی۔

جب کہ وزیراعظم عمران خان نے گزشتہ برس اکتوبر میں شوکت حسین عباسی کو چئیرمین کے عہدے سے برخاست کر دیا تھا۔


اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.