لاہورہائیکورٹ نے نجی سکولوں کے طلبہ سے پانچ فیصد اضافی فیسوں کی وصولی کیخلاف درخواستوں پرفیصلہ محفوظ کرلیا

لاہور : لاہور ہائیکورٹ نے نجی سکولوں کے طلبہ سے پانچ فیصد اضافی فیسوں کی وصولی کے خلاف دائر درخواستوں پر فیصلہ محفوظ کر لیا۔لاہورہائیکورٹ کے جسٹس عابد عزیز شیخ کی سربراہی میں تین رکنی فل بنچ نے کیس کی سماعت کی۔ دوران سماعت درخواست گزارطلبہ کے وکیل اظہر صدیق ایڈووکیٹ نے عدالت کو بتایا کہ نجی سکولوں کی جانب سے فیسوں میں من پسند اضافے سے طالبعلموں اور ان کے والدین کو مشکلات کا سامنا ہے، انہوں نے کہا کہ آئین کے آرٹیکل پچیس اے کے تحت تعلیم کو کاروبار نہیں بنایا جا سکتا نہ ہی تعلیم کے نام پر شہریوں کی جیبوں پر ڈاکہ ڈالا جا سکتا ہے،نجی سکولوں نے نئے قانون کے تحت فیسوں میں پانچ فیصد اضافہ کیا،انہوں نے کہا کہ نئے قانون کے تحت آٹھ فیصد تک اضافہ کیا جا سکتا ہے، انہوںنے استدعا کی کہ عدالت فیسوں میں پانچ فیصد اضافہ برقرار رکھنے کا حکم دے،عدالت نے فریقین کے وکلاءکے دلائل سننے کے بعد فیصلہ محفوظ کرلیا۔


اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.