حکومت کا عوام کیلئے ڈاکخانہ جات کی خدمات کو ڈیجٹلائز کرنے کا فیصلہ

پوسٹل سروسز کے وزیر مملکت مراد سعید نےکہا ہے کہ حکومت نے صارفین کو جدید اور تیز ترین سہولتیں فراہم کرنے کے لئے ڈاکخانہ جات کی خدمات کو ڈیجٹلائز کرنے کا منصوبہ بنایا ہے۔آج اسلام آباد میں صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ پاکستان پوسٹ ای کامرس، ری برانڈنگ ، موبائل منی آرڈر کی جانب سے بڑھ رہا ہے اور اس نے ملک بھر میں 13 ہزار ڈاکخانوں کے نیٹ ورک کے ذریعے لاجسٹک سہولتوں میں اضافہ کیا ہے۔انہوں نے کہا کہ پاکستان پوسٹ کے پاس 80 ارب روپے کی منڈی ہے اور یہ بہتر خدمات اور پر کشش مراعات کے ساتھ اپنے حصے کو بروئے کار لاسکتا ہے۔اس سے نہ صرف ادارے کے موجودہ 10 ارب روپے کے خسارے پر قابو پانے میں مدد ملے گی بلکہ یہ ایک منافع بخش ادارہ بن جائے گامراد سعید نے ذرائع ابلاغ اور عوام پر زوردیا کہ وہ پاکستان پوسٹ کی بحالی کے لئے حکومت سے تعاون کریں۔اس سے پہلے وزیر مملکت نے 50 ہزار روپےتک کی رقم کی فوری منتقلی کے لئے انقلابی منی آرڈر سروس کا افتتاح کیا۔ابتدائی طورپر یہ خدمات ملک بھر کے 93 جنرل پوسٹ آفسز میں شروع کی جارہی ہے جسے بعد میں دوسرے پوسٹ آفسز تک توسیع دی جائے گی۔مراد سعید نے ملک کے 25 بڑے شہروں میں پاکستان پوسٹ کی اسی روز ڈاک پہنچانے کی خدمات کا بھی افتتاح کیا۔


اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.