Daily Taqat

2014 دھرنا مقدمات ، شیریں مزاری بے گناہ قرار، دیگر کی ضمانت منظور

اسلام آباد: انسداد دہشت گردی عدالت نے 2014 کے دھرنے کے دوران قائم 4 مقدمات میں تحریک انصاف کے رہنماں کی ضمانت کی توثیق کردی جب کہ شیریں مزاری کو بے گناہ قرار دیا گیا ہے۔اسلام آباد کی انسداد دہشت گردی عدالت کے جج شاہ رخ ارجمند نے پی ٹی وی، پارلیمنٹ حملہ، ایس ایس  پی عصمت اللہ جونیجو پر تشدد سمیت 4 مقدمات کی سماعت کی۔ اس موقع پر عدالت نے تحریک انصاف کے رہنما شاہ محمود قریشی، شفقت محمود، اسد عمر اور عارف علوی کی ضمانت کی توثیق کردی۔عدالت نے شیریں مزاری کو بے گناہ قرار دیتے ہوئے کہا کہ انہیں مقدمے میں ضمانت کرانے کی ضرورت نہیں جب کہ عدالت نے زرضمانت کے لئے جمع کرائے جانے والے ایک لاکھ روپے کے مچلکے بھی واپس کرنے کی ہدایت کی۔ عدالت نے گزشتہ سماعت پر ایس ایس پی عصمت اللہ جونیجو پر تشدد کیس میں عمران خان کو 15 فروری جبکہ پی ٹی وی اور پارلیمنٹ حملہ کیس میں 26 فروری کے لیے طلبی کے سمن جاری کیے تھے۔یاد رہے کہ 2014 میں اسلام آباد میں تحریک انصاف کے دھرنے کے وقت پی ٹی آئی چیئرمین عمران خان اور شاہ محمود قریشی سمیت دیگر رہنماں کے خلاف چار مقدمات درج کیے گئے تھے، جن میں پی ٹی وی حملہ، پارلیمنٹ حملہ اور ایس ایس پی عصمت جونیجو تشدد کیس شامل ہے۔


Get real time updates directly on you device, subscribe now.

اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

Translate »