Daily Taqat

کورونا ویکسین کی خریداری: آئی ڈی بی سے 7 کروڑ ڈالر کی فنانسنگ کا معاہدہ

اسلام آباد: پاکستان اور اسلامی ترقیاتی بینک (آئی ڈی بی)کے مابین کوویڈ 19 ویکسین کی خریداری کے لیے 7 کروڑ 25 لاکھ ڈالر کی فنانسنگ کامعاہدہ طے پاگیا ہے۔

علاوہ ازیں اسلامی ترقیاتی بینک نے مہمند ڈیم ہائیڈرو پاور پراجیکٹ کے لیے 18 کروڑ ڈالر کی فنانسنگ کی بھی منظوری دی ہے۔

وزارت اقتصادی امور کی جانب سے جاری کردہ تفصیلات کے مطابق آئی ڈی بی کے صدر ڈاکٹر محمد الجیسر اور گورنر نے وفاقی وزیر برائے اقتصادی امور عمر ایوب خان سے ملاقات کی۔

آی ڈی بی کے دونوں سینئر عہدیدار اسلام آباد میں افغانستان کی صورتحال پر اسلامی تعاون تنظیم (او آئی سی ) کے سربراہی اجلاس میں شرکت کے لیے دورے پر آئے تھے۔

اس ضمن میں ترقیاتی بینک کے صدر ڈاکٹر محمد الجیسرنے پاکستان کے ساتھ تعاون اور شراکت داری کو مزید وسعت دینے کی یقین دہانی کراتے ہوئے اس عزم کا اعادہ کیا کہ آئی ڈی بی پاکستان کا صف اول کا ترقیاتی شراکت دار ہے۔

انہوں نے کہا کہ ہم پاکستان کے ترقیاتی وژن اور ترجیحات کا بھرپور حامی ہیں۔

اعلامیہ کے مطابق انہوں نے وفاقی وزیرعمر ایوب کو یقین دلایا کہ اسلامی بینک ترقی پذیر ڈھانچے، سماجی شعبہ کی ترقی اور پائیدار اقتصادی نمو کے حصول کے لیے مزید مالی وسائل کی فراہمی جاری رکھے گا۔

انہوں نے اس بات کی بھی یقین دہانی کرائی کہ اسلامی ترقیاتی بینک پٹرولیم مصنوعات کی درآمد سمیت دیگر تجارتی ضروریات کے لیے نجی قرضوں کی فراہمی میں تعاون جاری رکھے گا۔

ملاقات کے دوران اسلامی ترقیاتی بینک اور اقتصادی امور ڈویژن کے درمیان کوویڈ 19 ویکسین کی خریداری کے لیے 7 کروڑ 25 لاکھ ڈالر کی فنانسنگ کامعاہدہ طے پایا۔

صدر آئی ڈی بی نے مزید بتایا کہ بینک نے مہمند ڈیم ہائیڈرو پاور پراجیکٹ کے لیے 18 کروڑ ڈالر کی فنانسنگ کی بھی منظوری دی ہے۔

اس موقع پر وفاقی وزیر برائے اقتصادی امور عمر ایوب خان نے اسلامی ترقیاتی بینک کے صدر کی اسلام آباد آمد اور پاکستان کے لیے ان کے مسلسل تعاون پر شکریہ ادا کیا۔

انہوں نے کورونا وبا کے دوران کوویڈ 19 پر قابو پانے، بحالی اور ویکسین کی خریداری کے لیے رکن ممالک کے ساتھ تعاون کے اسلامی ترقیاتی بینک کے کردار کو سراہا۔

وفاقی وزیر نے مہمند ڈیم ہائیڈرو پاور پراجیکٹ جیسے کلین اینڈ گرین توانائی کی ترقی کے منصوبوں کے لیے اسلامی ترقیاتی بینک کے تعاون کو بھی سراہا جس سے نہ صرف 800 میگاواٹ بجلی پیدا ہو گی بلکہ پاکستان کے آبی ذخائر کی گنجائش میں 12 لاکھ 93 ہزارایکڑ فٹ کا بھی اضافہ ہو گا۔

عمرایوب نے کہا کہ اس اقدام سے غذائی تحفظ کو استحکام ملے گا اور پشاور کے شہریوں کو 13.32 کیوسک پینے کا صاف پانی بھی میسر آئے گا، مہمند ڈیم سے مقامی افراد کے لیے براہ راست روزگار کے 6 ہزار مواقع پیدا ہوں گے۔

تبادلہ خیال کے دوران وفاقی وزیر اقتصادی امور نے بینک کے ساتھ بہتر تعاون اور شراکت کے لیے اسلام آباد میں علاقائی دفتر کے قیام کی ضرورت پر زور دیا۔


Get real time updates directly on you device, subscribe now.

اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

Translate »