مہنگائی نےعوام کی کمر توڑ دی

لاہور: ملک بھر میں رواں ماہ کے پہلے ہفتے میں مہنگائی کی شرح 1.24 فیصد اضافے کے ساتھ 11.28 فيصدہوگئی ہے جو 3 ماہ کی بلند ترین سطح ہے۔

وفاقی ادارہ شماریات کی جانب سے مہنگائی کی ہفتہ وار رپورٹ کے اعداد و شمار کے مطابق مہنگائی کی شرح میں گزشتہ ایک ہفتے میں ہی 1.24 فیصد اضافہ دیکھنے میں آیا ہے جس سے ملک میں مہنگائی 3 ماہ کی بلند ترین سطح پرپہنچ گئی ہے۔ اعداد و شمار میں بتایا گیا ہے کہ گزشتہ ہفتے کے دوران ملک میں پیازمزيد 8 روپے مہنگی ہوکر فی کلو75روپے کی ہوگئی ہے، ٹماٹر 128 روپے فی کلو جب کہ انڈے 160 روپے فی درجن ہوگئے ہیں۔

وفاقی ادارہ شماریات کے اعداد و شمار کےمطابق اسلام آباد ميں چينی 110روپے فی کلوميں فروخت کی جارہی ہے جب کہ کراچی میں 20 کلو آٹا 1380 سے 1500 روپے میں فروخت کیا جارہا ہے۔ اعداد و شمار میں مزید بتایا گیا ہے کہ اکتوبر کے پہلے ہفتے میں قیمتیں بڑھنے کی شرح 11.28 فیصد تک پہنچ گئی ہے، مہنگائی کی شرح ایک ہفتے میں ہی 1.24 فیصد بڑھی ہے، چکن کی قیمت 10 روپے بڑھ کر172 روپے فی کلو ہوگئی ہے جب کہ آلواور دال مسور کے نرخ بھی بڑھ گئے ہیں۔

اعداد و شمار کے مطابق گزشتہ ہفتے کیلے دال مونگ، ماش، گڑ سمیت 4 اجناس کی قیمتوں میں معمولی کمی آئی جب کہ گھی، کوکنگ آئل، مرچ، چائے سمیت 23 اشیاء کی قیمتیں مستحکم رہی ہیں۔


اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.