Daily Taqat

آئی ایم ایف مذاکرات، حکومت کا عوام پر بجلی اور گیس کے بم گرانے کا ارادہ

اسلام آباد : عالمی مالیاتی ادارے نٹرنیشنل مونیٹری فنڈ  کی جانب سے پاکستان کو کڑی شرائط پر قرضہ ملنے کا امکان ہے۔وفاقی دارالحکومت میں مالیاتی پیکج کیلئے پاکستان اورآئی ایم ایف کے پالیسی مذاکرات کاپہلا دور ہوا جس میں مہمان وفد سے وزارت خزانہ کے سینئرحکام نے ملاقات کی۔ آئی ایم کے وفد نے مذاکرات میں پاکستانی معاشی ٹیم کی قیادت وزیرخزانہ اسد عمر کر رہے ہیں۔ذرائع کے مطابق اہم مذاکرات میں وفد کو آئندہ بجٹ اورٹیکسزمیں اضافے سے متعلق تفصیلات اور پاکستان کی جانب سے آئندہ مالی سال کامالیاتی پلان پیش کیاگیا جب کہ ٹیکس نیٹ اورمحصولات کا اہداف بڑھانے کے ارادے سے بھی وفد کو آگاہ کیا گیا ۔آئی ایم ایف کے وفد کو بریفنگ کے دوران بتایا گیا کہ حکومت بجلی وگیس کی قیمتوں میں اضافے کا ارادہ رکھتی ہے ۔ مہمانوں کو گردشی قرضےمیں کمی کاپلان بھی دیاگیا اور ساتھ ہی پٹرولیم مصنوعات میں سالانہ ٹیکس کاڈھانچہ بھی دیا گیا۔ذرائع نے انکشاف کیا ہے کہ مالیاتی پیکج کیلئےآئی ایم ایف کی جانب سے کڑی شرائط کا امکان ہے تاہم وفد سے پالیسی مذاکرات اداروں کے اعلیٰ عہدیدار کر رہے ہیں جب کہ آئی ایم ایف کے وفد نے ایف بی آر کے حکام کے ساتھ بھی مذاکرات کیے ہیں۔


Get real time updates directly on you device, subscribe now.

اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

Translate »