اہم خبرِیں
انوپم کھیر کا خاندان بھی کورونا وائرس کا شکار فیصل واوڈا نے کے الیکٹرک سے متعلق بلاول بھٹو کی رپورٹ کو کرپشن... چین میں طوفانی بارشوں کے باعث بدترین سیلابی صورتحال پیدا گوگل کا بھارت میں 10 ارب ڈالر کی سرمایہ کاری کرنے کا اعلان ’ارطغرل غازی‘ کی حلیمہ سلطان کو کیو موبائل نے اشتہار کیلئے منت... احسن اقبال کی نیب کو وزیر اعظم کے خلاف ریفرنس دائر کرنے کی د... ہوٹل کی7 ویں منزل سے گرنے والے شخص کی بالکونی میں دوسرے شخص سے... اسلام آباد ہائیکورٹ نے آن لائن پب جی گیم پر پابندی کےخلاف درخو... افغانستان سے پاکستان چرس کی بڑی کھیپ کی اسمگلنگ کی کوشش ناکام سیاست سے دور جہانگیر ترین ان دنوں کہاں؟ لاہور سمیت پنجاب کے چھوٹے بڑے شہروں میں بجلی کی آنکھ مچولی جا... حکومت کو شوگر ملز کے خلاف کارروائی کی اجازت، سپریم کورٹ دودھ کی قیمتوں میں مزید اضافے کا عندیہ بن قاسم پاور پلانٹ میں تکنیکی خرابی کا دعویٰ ،کے الیکٹرک 45 سالہ شخص کی 6 سالہ بچی سے زیادتی شوگر ملز ایسوسی ایشن سے جہانگیر ترین گروپ کا خاتمہ کووڈ-19 کی ٹیم کے کپتان کی حیثیت سے خدمات انجام دینے پرپاکستان... سی ٹی ڈی کی کاروائی پر کالعدم تنظیم کے تین دہشت گرد گرفتار پنجاب میں لوڈ شیڈنگ کا سلسلہ جاری یواے ای کا مریخ پرروانہ ہونیوالا مشن ملتوی

پی ٹی آئی حکومت کی مثبت پالیسیوں کے اثرات نمایاں ہونے لگے

پی ٹی آئی حکومت کی مثبت پالیسیوں کے اثرات نمایاں ہونے لگے

اسلام آباد : پی ٹی آئی حکومت کی مثبت معاشی پالیسیوں کے اثرات نمایاں ہونے لگے ، تجارتی خسارے میں گذشتہ سال کے مقابلے میں اٹھائیس فیصد کمی آگئی۔

تفصیلات کے مطابق ادارہ برائےشماریات نے پہلے 7ماہ کےتجارتی اعدادوشمارجاری کردیئے، جس میں بتایا گیا مالی سال2019-20کےپہلے 7ماہ تجارتی خسارےمیں 28فیصدکمی ہوئی اور تجارتی خسارے کا حجم 13 ارب 75 کروڑ ڈالر رہا۔

ادارہ برائےشماریات نے کہا رواں مالی سال کے پہلے سات ماہ میں برآمدات میں 2.14 فیصد اضافہ ریکارڈ کیا گیا اور برآمدات 28کروڑ 20لاکھ ڈالرزائد رہیں ، پہلے7ماہ میں13 ارب 50کروڑڈالرکی برآمدات ہوئیں، گزشتہ سال اس عرصےمیں 13 ارب 22کروڑ ڈالر کی برآمدات ہوئیں۔

اعدادوشمار کے مطابق ملکی درآمدات 7ماہ کے دوران 27 ارب 25 کروڑ ڈالر رہیں جبکہ گزشتہ سا ل اس عرصےمیں 32 ارب 42 کروڑ ڈالر کی درآمدات ہوئیں ، درآمدات میں سولہ فیصد کمی ریکارڈ کی گئی اور 5 ارب 17کروڑ ڈالر کم رہیں۔

ادارہ برائےشماریات کا کہنا تھا کہ امسال پہلے7ماہ میں 13 ارب 75کروڑ ڈالر کا تجارتی خسارہ ہوا اور خسارہ 28.40 فیصدکمی سے 5 ارب 45کروڑ ڈالر کم رہاجبکہ گزشتہ سال اس عرصےمیں 19 ارب 20کروڑ ڈالر کا تجارتی خسارہ ہواتھا۔

اعدادوشمار میں بتایا گیا جنوری میں تجارتی خسارے کا حجم دو ارب ڈالر رہا، گزشتہ سال جنوری کے مقابلے میں یہ حجم پندرہ فیصد کم ہے۔

خیال رہے سال 2019 ملکی معیشت کے لیے انتہائی اہم ثابت ہوا، پاکستانی معیشت کے کھاتے نہ صرف بہتر ہوئے بلکہ جاری کھاتوں کا خسارہ کرنٹ اکاؤنٹ بھی سرپلس بن گیا تھا۔


Get real time updates directly on you device, subscribe now.

اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.