اہم خبرِیں
پاکستان فرانسیسی شعبہ زراعت اور شعبہ حیوانات کی مہارت سے استفا... میر شکیل الرحمان کی ہمشیرہ کے انتقال پر سی پی این ای کا تعزیت ... شمالی وزیرستان، پاک فوج کا آپریشن، چاردہشت گرد جہنم وصل گھوٹکی ٹرین حادثے کو پندرہ سال بیت گئے پاکستان میں کورونا کے 2 ہزار 521 نئے کیسز،74 اموات انگلستان کی پاکستان میں ڈھائی لاکھ ڈالر کی سرمایہ کاری آیاصوفیہ مسجد کی کہانی ” آپ ایسا کریں کہ آپ کل آ جائیں“ اسٹیٹ بینک کےقوانین کی خلاف ورزی پر 15 کمرشل بینکوں کو بھاری ... ایرانی سیبوں کی درآمد، قومی خزانے کو نقصان پہنچانے پر 22 درا... شاہد آفریدی کا کورونا میں مبتلا بچن خاندان کے لیے نیک خواہشات ... مقبوضہ کشمیر میں بھارت کی ریاستی دہشتگردی پھر سے سر اُٹھانے لگ... تھیم پارک ڈزنی لینڈ کھولنے کا فیصلہ ماڈل ایان علی کی شوبز میں واپسی پاکستانی نوجوان کے دن پھر گئے، سعودیہ میں فیشن ماڈل بن گیا ڈونلڈ ٹرمپ پہلی بار ماسک پہن کر عوام کے سامنے ‌ایکسپو سینٹر لاہور میں کورونا کے زیرعلاج تمام مریض ڈسچارج وزیراعظم کی ہدایت کے باوجود کراچی میں غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ عرو... شادی کی تقریب میں ہوائی فائرنگ بیٹے کی گولی سے باپ شدید زخمی وزیر اعلیٰ سندھ کورونا ٹیسٹنگ سے غیر مطمئن

کرونا کے بعد؟

مجھے یاد آیا ہے کہ ہم انسان ہیں مگرہم میں کون سی ایسی خاصیت ہے کہ ہم ایک دوسرے کے ساتھ مطلب کے بغیر بات بھی نہیں کرتے ہمیں اللہ تعالیٰ نے اس لیے پیدا کیا ہے کہ ہم ایک دوسرے کے ساتھ پیار اور خلوص کے ساتھ زندگی گزاریں پر ابھی تک ہم کو اس کا علم ہی نہیں ہوا !افسوس کہ ہم اب تک پوری دنیا کے ساتھ چل رہے ہیں پر ہمارے ساتھ کوئی نہیں چل رہاتقریباً سترسالوں سے مسئلہ کشمیر حل نہیں ہوا اور نہ ہی ہم حل کرواسکتے ہیں اتناتو مشکل نہیں تھااگر ہم اکٹھے ہو کر انسانیت کی خاطرکرتے تو آج یہ مسئلہ ہوتا ہی نہیں اگر ہوا بھی تھا کسی کی غلطی سے تو حل ہو سکتا تھاسترسالوں تک ان کشمیری بہن بھائیوں سے پوچھیں جو مقبوضہ کشمیر میں نہتے بھارتی فوج کا ظلم و ستم برداشت کر رہے ہیں بچے بھوک وپیاس سے بلک بلک کر مر رہے ہیں مجھے ایسا لگ رہا ہے جو مسلمانوں کے ساتھ کیا بلکہ پور ی دنیا کے ساتھ جو یہ کوروناوباء جیسی بیماری آئی ہے یہ سب ان کشمیری بہن بھائیوں کی آہ لگی ہے ہمیں آج اور ابھی مل کر انسانیت کی خاطر اکٹھے ہو کر اس ظلم کو روکیں آج جتنا بھی نقصان پوری دنیا میں ہو رہا ہے سب کچھ ہو تے ہوئے بھی انسانی زندگیاں ضائع ہو رہی ہیں اور سب سے بڑی بات یہ کہ اللہ تعالیٰ نے مسلمانوںکیلئے تو بہ کا دروازہ بھی بند کر دیا ہے ۔حج وعمرہ نہیں کر سکتے مسلمانوں کے پاس وسائل ہو تے ہو ئے بھی وہ حج و عمرہ نہیں کرنے جاتے اللہ نے مسلمانوں کو اپنے سامنے کھڑا کرنا بھی گوارہ نہیں کیا میری آپ سب سے گزارش ہے اپنے ضمیر کو زندہ کرو اور منافقت چھوڑدو اور اللہ سے توبہ کرو اور اس بیماری سے کرونا وائرس سے جان چھڑاؤ سب توبہ کریں اس کے علاوہ کوئی حل نہیںجتنا پیسہ اب تک ضائع ہو رہا ہے اس کا ایک حصہ بھی لگتا تو کشمیر ایک علیحدہ ملک ہوتا اللہ پاک سے توبہ کریں اللہ تعالیٰ سب جاننے والا اور ہر چیز پر قادر ہے جیسا کہ عراق، شام ،فلسطین ،برما یہ مسلمانوں کے ممالک ہیںان ممالک میں ظلم و ستم کی انتہا ہو رہی ہیں جتنا ان معصوموں پر ظلم ہو رہا ہے یہ ظلم کاایک حصہ بھی نہیں یہ کرونا جیسی بیماری اور لوگ ایک دوسرے سے ہاتھ ملانے سے دور ہوگئے ہیں تو ذرا سوچئے!وہ کتنے پیاروں کو کھو چکے ہیں اس لیے اللہ تعالیٰ سے رورو کر توبہ کریں اور بے شک اللہ ہر چیز پر قادر ہے


Get real time updates directly on you device, subscribe now.

اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.