Latest news

موت کی وادیوں میں ایک آواز

زندگی، موت کی وادیوںمیں ایک آواز کانام ہے۔ صد حیف ہم اسے عمر بھر بھلائے رکھتے ہیں۔ مگر موت نے ہمیں کبھی فراموش نہیں کیا۔ چند روز قبل موت نے محمد عاشق حسین کو بھی یاد کر لیا۔ عاشق حسین؟ جی ہاں! مسلم لیگ ن کی پنجاب اسمبلی میں شاید کم عمر ترین ایم پی اے ثانیہ عاشق کے والد ماجد! میں سوچتا ہوں کہ وہ بھی کیسے انسان تھے، جنہوں نے مادی سطح پر اپنا سفر حیات ایک عام آدمی کے طور پر شروع کیا اور پھر خاص ہوئے۔ اس کے بعد خاص الخاص! محمد عاشق حسین مرحوم محکمہ پنجاب سمال انڈسٹری ڈیپارٹمنٹ میں سپرنٹنڈنٹ کے عہدہ سے ریٹائر ہوئے۔ کینسر کے موزی مرض میں مبتلا تھے۔ بیماری تو محض ایک بہانہ ٹھہری۔ اصل میں زندگی دینے والے کی طرف سے بلاوا آجاتا ہے اور اس کا نظام و قانون کچھ ایسا ہے کہ دھیان عموما موت اور زندگی کے خالق کی طرف نہیں جاتا!
ثانیہ عاشق بتاتی ہیں کہ والد نے ہمیں سراٹھا کے زندہ رہنے کا قرینہ سکھایا۔ میں جو کچھ بھی ہوں ان کی وجہ سے ہوں۔ اور پھر محترمہ مریم نواز شریف صاحبہ! والد صاحب نے گویا انگلی پکڑ کے مسلم لیگ (ن) اور پھر مریم بی بی تک پہنچایا۔ مریم نواز صاحبہ سیاست میں ن کی آئیڈیل ہیں۔ انہوں نے ہی سیاسی طور پر ثانیہ عاشق کی تراش خراش کی اور پھر میدان میں لااتارا۔ غیر سیاسی مزاج کا سیاسی ہو جانا ایک کرامت ہے۔ یہ کرامت مریم نواز صاحبہ نے جاگتی آنکھوں دکھائی!
بقول غالب: ”وفاداری بشرط استواری اصل ایمان ہے۔“ ثانیہ عاشق کی وفاداری و استواری نے اوپر اٹھایا اور مسلم لیگ ن میں خاص شناخت قرار پائی۔ ان کے سر سے والد کا سایہ اٹھ گیا ہے اب انہیں کڑی دھوپ کا سامنا ہے۔ اس سوگوار ماحول میں بھی مریم نواز صاحبہ ان کا سائبان ہیں۔ ماں کے ساتھ باپ بھی! ثانیہ عاشق ایک وسیع حلقہ احباب اور ہمدرد طبقہ رکھتی ہیں ان میں کئی لازم و ملزوم ہیں۔ میں نے مسلم لیگ ن کی نمایاں خواتین، ایم پیز حنا پرویز بٹ اور عظمیٰ بخاری کو پیکر غم بنے دیکھا۔ لگتا تھا کہ وہ رسم نہیں حقیقت نبھا رہی ہیں! ہم بدست دعا ہیں کہ خداوند کریم محمد عاشق حسین مرحوم کو جوار رحمت میںجگہ عطا فرمائے اور ان کے وقار کو صبر جمیل! دکھ کی اس گھڑی میں ہم ان کے ساتھ ہیں۔ بنیادی طور پر جس کے زخم لگتا ہے وہی اس کی اذیت جانتا ہے۔ لیکن اہل دن پر بھی یہ کیفیت طاری ہو جایا کرتی ہے۔ ہم اسی کیفیت سے دوچار ہیں۔ شاعر نے کہا تھا۔
آہ! ہم سے زندگی کی حقیقت نہ پوچھ
موت کی وادیوں میں ایک آواز!


اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.