اہم خبرِیں
اسپیس ایکس کے فالکن راکٹ نے 57 سیٹلائٹ خلا میں پہنچا دیے بیروت دھماکہ، حکومت مخالف مظاہرے مانچسٹر ٹیسٹ، انگلینڈ نے پاکستان کو 3 وکٹوں‌ سے شکست دے دی کوئی شرم کوئی حیا ہوتی ہے، بلال سعید اور صبا قمر کی مسجد میں گ... غازی فیصل خالد اسلام کا ہیرو ہے ،آل پارٹیز سٹوڈنٹس یوتھ کانفرن... تحفظ بنیاد اسلام ایکٹ اور ریاست مدینہ عصا نہ ہو تو کلیمی ہے کارِ بے بنیاد! مال اور اعمال آخر مسئلہ کشمیر کیسے حل ہوگا؟ کشمیر پر بھارت اب معاہدہ شملہ کے پیچھے نہیں چھپ سکتا زیب النسا محترمہ زیب النساء زیبی ، نام ہے ایک عہد کا! خیبرپختونخواہ حکومت کو درپیش چیلنجز ہمارے اپنے خود کش بمبار مانچسٹر ٹیسٹ، پاکستان نے انگلینڈ کو 277 رنز کا ٹارگٹ دے دیا مریم نواز کی نیب طلبی بیروت دھماکا میزائل حملہ ہوسکتا ہے، لبنانی صدر عالمی بینک کے پاکستان میں 11 بلین ڈالر کے منصوبے زیر تکمیل ہیں... ایف آئی اے بینظیر انکم سپورٹ پروگرام کے افسران کے خلاف کاروائی... فوج نے کراچی میں آپریشن شروع کردیا مظفر علی سید اور ''تنقید کی آزادی

ارطغرل دیکھنے کےبعد بلال اشرف کاپیغام

پاکستان ٹیلی ویژن پر یکم رمضان سے دکھائی جانے والی ترک سیریز “ارطغرل غازی ” مقبولیت کے نئے ریکارڈز قائم کررہی ہے۔ارطغرل کو پسند کرنے والوں میں معروف اداکار بلال اشرف کا نام بھی شامل ہے۔

سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹوئٹرپربلال نے لکھا ” ارطغرل شاندار ہے، عظیم کہانی اور زبردست پروڈکشن” ۔

اداکار  نے اس بات پراس بات پر خوشی کا اظہار کیا کہ اس ڈرامے کو پاکستان کے مقامی دیکھنے والوں کیلئے متعارف کرایا گیا۔

بلال اشرف نے اس بات پر بھی زور دیاکہ فلم / ڈرامہ آرٹ کی ایک قسم ہے جسے سراہنے کی ضرورت ہوتی ہے، بغیر اس بات کی پرواہ کیے کہ اسے کہاں بنایا گیا تھا۔

بلال کی ٹویٹ کا آخری جملہ شاید اداکار شان شاہد کے تحفظات کے جواب میں لکھا گیا ہے، حال ہی میں شان نے سرکاری ٹی وی پر بیرونی مواد نشرکیے جانے کی مخالفت کرتے ہوئے اپنی ٹویٹ میں لکھا تھا” ہمیں اپنی تاریخ اور اس کے ہیروز کو تلاش کرنا چاہیے”۔

واضح رہے کہ پاکستان میں وزیراعظم عمران خان کی فرمائش پریکم رمضان سے ترکی کا “گیم آف تھرونز ” کہلایا جانے والا یہ ڈرامہ “دیریلیش، ارطغرل” دکھایا جارہا ہے۔ ارطغرل کی کہانی 13 ویں صدی میں سلطنت عثمانیہ کےقیام سے قبل کی ہےجس میں اسلامی فتوحات کا سلسلہ دکھایا گیا ہے۔

ارطغرل کو پاکستان میں دکھائے جانے سے قبل مخلتف زبانوں میں ڈبنگ کے بعد دنیا کے 60 ممالک میں دکھایا جاچکا ہے۔ اس کے 5 سیزن ہیں۔


Get real time updates directly on you device, subscribe now.

اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.